اسسٹنٹ ڈائریکٹرایڈمن کیخلاف ہراسگی کی تحقیقات سردخانہ کی نذرہوگئیں 

 اسسٹنٹ ڈائریکٹرایڈمن کیخلاف ہراسگی کی تحقیقات سردخانہ کی نذرہوگئیں 

  

پشاور(سٹی رپورٹر)سٹی ڈسٹرکٹ گورنمنٹ کے اسسٹنٹ ڈائریکٹرایڈمن کیخلاف ہراسگی کی تحقیقات سردخانہ کی نذرہوگئیں،صوابی سے تعلق رکھنے والی بااثرشخصیت کی مداخلت پرمعاملہ دبادیاگیا،سٹی ڈسٹرکٹ گورنمنٹ میں ڈیپوٹیشن پراسسٹنٹ ڈائریکٹرایڈمن کے عہدے پرتعینات آفیسرکے خلاف سٹی ڈسٹرکٹ گورنمنٹ کے کالجز اورسکولوں میں معلمات اورطالبات کوہراساں کرنے کی مسلسل شکایات پرمحکمہ بلدیات نے شفاف تحقیقات کیلئے کمیٹی تشکیل دی تھی جس نے ایک ہفتہ کے اندراپنی رپورٹ اعلیٰ حکام کوارسال کرنی تھی،تحقیقات کے دوران اے ڈی ایڈمن پرلگائے الزامات درست ثابت ہوئے توصوابی سے تعلق رکھنے والی صوبائی وزیرکی شفارش پرمعاملہ کوسردخانہ کی نذرکردیاگیا،جس کے باعث تقریباً پانچ سے چھ ماہ کاعرصہ گزرنے کے باوجود تحقیقاتی کمیٹی اپنی ذمہ داری ادانہیں کررہی ہے،جس کی وجہ سے طالبات اورمعلمات میں بے چینی پائی جاتی ہے جنہوں نے وزیراعلیٰ سے مطالبہ کیاہے کہ ہراسگی میں ملوث آفیسرکوواپس اس کے محکمہ میں بھیجاجائے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -