ویزافاؤنڈیشن کی طرف سے 250,000 ڈالر کی فنڈنگ

ویزافاؤنڈیشن کی طرف سے 250,000 ڈالر کی فنڈنگ

  

لاہور (پ ر)  ویزافاؤنڈیشن نے پاکستان میں اسمال اور مائیکرو بزنسز(SMBs) کی مدد کے لیے 250,000 ڈالر کی فنڈنگ کا اعلان کیا ہے۔اس فنڈنگ میں ایسے پروگراموں کے لیے گرانٹس شامل ہیں جو صنفی شمولیت اور متنوع سوچ کے ساتھ SMBs کو تربیت،امدادی خدمات اور سرمائے تک رسائی فراہم کرتے ہیں۔اس گرانٹ کا مقامی وصول کنندہ اخوت ہے جو دنیا کی سب سے بڑی سود سے پاک مائیکرو فنانس آرگنائزیشن ہے اور غربت کے خاتمے اور سماجی و معاشی اعتبار سے کم مراعات یافتہ طبقوں کو با اختیار بنانے کے لیے کام کر تی ہے۔آرگنائزیشن کو یہ فنڈنگ خواتین کی زیر قیادت بزنسز پر اصرار کے ساتھ COVID-19 امدادی قرضوں میں سہارا دینے کے لیے دی گئی ہے۔یہ فنڈنگVisa فاؤنڈیشن کی Equitable Access Initiative (مساوی رسائی کی کاوش)کا حصہ ہے،200 ملین ڈالر کے اس تزویراتی وعدے کا اعلان اپریل،2020 میں کیا گیا تھا اور اس کا مقصد خواتین کی معاشی ترقی کے استحکام پر اصرار کے ساتھSMBs کی طویل المدت ضروریات کو پورا کرنا ہے،جوCOVID-19 وَباسے لمبی مدت کی معاشی بحالی میں اہم ثابت ہو گا۔Visa کے کنٹری مینجر برائے پاکستان،کامل خان نے کہا کہ" SMBs معیشت کی ریڑھ کی ہڈی ہیں۔یہ بات اہمیت کی حامل ہے کہ SMB مالکان اور کاروباری اداروں کو ایسے وسائل،علم اور مہارت سے با اختیار بنایا جائے جوموجودہ حالات میں مستحکم بزنسز کی تعمیر نو یا آغاز میں ان کی مدد کر سکیں۔

ہمیں فخر ہے کہ Visa فاؤنڈیشن اخوت جیسی آرگنائزیشن کو فنڈنگ کر رہی ہے،جو ضروریات کو پورا اور فنڈنگ کے لیے اُن رکاوٹوں کو دور کرنے میں مدد دے رہی ہے جن کا پاکستان میں صنفی اعتبار سے متنوع اور ہمہ گیرSMBs کو سامنا ہے،اور ایسا کرتے ہوئے ایسی مضبوط کمیونیٹیز کی تعمیر میں مدد دے رہی ہے جہاں ہر کوئی خوش حال ہو سکے"۔

مزید :

کامرس -