مخالفین کی فائرنگ سے کاشتکار قتل، حادثہ، ایک جاں بحق، لاش برآمد 

مخالفین کی فائرنگ سے کاشتکار قتل، حادثہ، ایک جاں بحق، لاش برآمد 

  

ملتان، بورے والا(وقائع نگار،تحصیل رپورٹر) معروف نجی ہوٹل کے قریب نامعلوم شخص کومردہ حالت کی اطلاع پاکر پولیس نے موقع پر پہنچ کر نعش قبضے میں لیکر جانچ پڑتال کی گئی تو جس کی شناخت محمد یوسف کے نام سے ہوئی جو بظاہر نشئی معلوم ہوا کی نعش کاغذی کارروائی مکمل کرنے کے بعد ورثاکے حوالے کردی۔نواحی گاوں 515/ ای بی میں طارق نامی محنت کش اپنے ایک ساتھی کے ہمراہ کھیتوں کو پانی لگا(بقیہ نمبر25صفحہ6پر)

 کر واپس گھر آرہے تھا کہ راستے  میں گھات لگائے بیٹھے تین نامعلوم مسلح افراد نے انہیں روک کر دونوں کو علیحدہ کرکے طارق کو فائرنگ کرکے قتل کردیا اور موقو سے فرار ہوگئے تھانہ صدر پولیس نے نعش پوسٹمارٹم کے لئے ہسپتال منتقل کرکے کاروائی شروع کردی مقتول کا بھائی کی طرف سے واردات کو دوران ڈکیتی قتل جبکہ اہل علاقہ اس واقعہ کو ٹارگٹ کلنگ قرار دے رہے ہیں تاہم پولیس مصروف تفتیش ہے۔نواحی علاقہ غفور واہ کا رہائشی نذر محمد  اپنی بیوی اور بیٹی کے ہمراہ موٹر سائیکل پہ سوار ہوکر لڈن پر جارہے تھے کہ اڈا ساتواں میل کے قریب موٹر سائیکل بے قابو ہوکر سامنے سے آنے والے رکشہ سے تصادم کے نتیجہ میں نذر محمد موقع پر ہی جانبحق ہوگیا جبکہ اسکی بیوی منظوراں بی بی اور بیٹی صفیہ بی بی شدید زخمی ہوگئیں حادثہ کی اطلاع ملتے ہی ریسکیو1122 کی ٹیم نے جانبحق شخص کی نعش اور زخمیوں کو ٹی ایچ کیو ہسپتال منتقل کردیاغفور واہ کا رہائشی نذر محمد ولد لال دین اپنی بیوی اور بیٹی کو دربار حاجی شیر سے زیارتِ کر کے  اپنے گھر واپس جارہے تھے کہ اڈا ساتواں میل کے قریب سامنے سے آ تے رکشہ نے ٹکر مار دی جس کے نتیجے میں نذر محمد موقع پر ہی جاں بحق ہوگیا جبکہ 10سالہ بیٹی صفیعہ بی بی اور والدہ منظوراں بی بی شدید زخمی ہو گئیں رکشہ ڈرائیور رکشہ چھوڑ کر موقع سے فرار ہوگیا نعش اور زخمیوں کو ٹی ایچ کیو ہسپتال منتقل کر دیا گیا۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -