ہائیکورٹ نے باپ کےخلاف دائر حبس بیجا کی درخواست نمٹاتے ہوئے دو بچے باپ سے لے کر ماں کے حوالے کر دئیے ،عدالت کا ماحول افسردہ ہو گیا

ہائیکورٹ نے باپ کےخلاف دائر حبس بیجا کی درخواست نمٹاتے ہوئے دو بچے باپ سے لے ...
ہائیکورٹ نے باپ کےخلاف دائر حبس بیجا کی درخواست نمٹاتے ہوئے دو بچے باپ سے لے کر ماں کے حوالے کر دئیے ،عدالت کا ماحول افسردہ ہو گیا

  

لاہور( این این آئی )لاہور ہائیکورٹ نے باپ کے خلاف دائر حبس بیجا کی درخواست نمٹاتے ہوئے دو بچے باپ سے لے کر ماں کے حوالے کر دئیے،اس موقع پر انتہائی رقت آمیز مناظر دیکھنے میں آئے جس سے ماحول افسردہ ہوگیا۔گزشتہ روز لاہور ہائیکورٹ کی جسٹس عالیہ نیلم نے کیس کی سماعت کی۔خاتون درخواست گزار فریحہ نے عدالت کو بتایا کہ اسکے سابق شوہر نے طلاق کے بعد اس سے بچے چھین لئے ہیں اور انہیں حبس بیجا میں رکھا ہوا ہے ۔عدالتی حکم پر دونوں بچوں کو عدالت کے روبرو پیش کیا گیا تو عدالت نے پانچ سالہ لائبہ اور چار سالہ منان کو باپ سے لے کر ماں کے حوالے کر دیا۔اس موقع پر دونوں بچے باپ سے لپٹ گئے اور ماں کے پاس جانے سے انکار کرتے ہوئے دھاڑیں مار مار کر روتے رہے جس سے ماحول بھی افسردہ ہوگیا ۔فاضل عدالت نے والد کو بچوں کی حوالگی کے لئے گارڈین کورٹ سے رجوع کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے حبس بیجا کی درخواست نمٹا دی۔

مزید : جرم و انصاف