رواں سال کی پہلی سہ ماہی کے دوران چین سے سرمائے کے بیرون ملک بھاؤ میں کمی ریکارڈ

رواں سال کی پہلی سہ ماہی کے دوران چین سے سرمائے کے بیرون ملک بھاؤ میں کمی ...

بیجنگ( آن لائن ) رواں سال کی پہلی سہ ماہی کے دوران چین سے سرمائے کے بیرون ملک بھاؤ میں کمی ریکارڈ کی گئی۔چین کے فارن ایکس چینج ریگولیٹر ادارے کے ترجمان وانگ چنینگ کے بیان کے مطابق سخت مالیاتی پالیسیوں اور جائزوں کے باعث رواں سال کی پہلی سہ ماہی کے دوران چین سے سرمائے کے غیر ملکی بہاؤ میں کمی رہی جس کی وجہ سے مارچ میں چین کے غیر ملکی کرنسی ذخائر(فارن کرنسی ریزرو) کا حجم 3 ٹرلین ڈالر کے سطح کو دوبارہ عبور کر گیا ہے۔اس سہ ماہی کے دوران چین کے کمرشل بینکوں سے فارن ایکس چینج ریٹس کی خالص فروخت میں 40.9 بلین ڈالر کی کمی آئی ہے جن کی سیل کا حجم گذشتہ سال کی پہلی سہ ماہی میں 124.8 بلین ڈالر رہا تھا۔چین کے سنٹرل بینک کے مطابق مارچ میں ان کے نیٹ فارن ایکس چینج ریٹس کی فروخت 54.7 بلین یو آن(7.94 بلین ڈالر) رہی جو کہ دس ماہ کی کم ترین سیل ہے اور مارچ میں فارن ایکسچینج کے ریزرو 3.009 ٹرلین ڈالر کی سطح پر آگئے ہیں۔

مزید : کامرس