توہین رسالت قانون کو کسی صورت ختم نہیں ہونے دینگے :نور الحق قادری

توہین رسالت قانون کو کسی صورت ختم نہیں ہونے دینگے :نور الحق قادری

چارسدہ (بیورو رپورٹ)چا رسدہ میں عاشقان رسول ﷺ کا تاریخی اجتماع ۔ ۔ سندھ ، بلو چستان ،پنجاب ،آزاد کشمیر ، فاٹا، خیبر پختونخوا اور بیرونی ممالک سے ہزاروں کی تعداد میں عاشقان رسول ﷺ مجاہد کشمیر حاجی محمد امین صاحب کے مزار پر جمع ۔ گستاخان رسول ﷺ کے پیچھے ایک بڑی قوت کار فر ما ہے جس کے خلاف جدو جہد ہم سب کی ذمہ داری ہے ۔ توہین رسالت قانون کو کسی صورت ختم نہیں ہونے دینگے ۔پاکستانی حکمران سمیت مسلم امہ برما، کشمیر اور افغانستان میں مسلمانوں پر کئے جانے والے مظالم پر کیوں خاموش ہے ۔سابق وفاقی وزیر پیر نور الحق قادری اور دیگر مقررین کا نفرنس سے خطاب ۔ تفصیلات کے مطابق حاجی آباد عمر زئی میں مجاہد کشمیر حاجی محمد امین صاحب کے مزار لبیک یا رسول اللہ کانفرنس منعقد ہوئی جس میں سندھ ، بلو چستان ،پنجاب ،آزاد کشمیر ، فاٹا، خیبر پختونخوا اور بیرونی ممالک سے ہزاروں کی تعداد میں عاشقان رسول ﷺ نے شرکت کی ۔ تاریخی کانفرنس میں مصر کے سید جمال حسین اور کئی دیگر ممالک کے مندوبین نے حصوصی طور پر شرکت کی ۔ تاریخی کانفرنس سے خطاب کر تے ہوئے سابق وفاقی وزیر پیر نور الحق قادری ، حادم حسین ردوی ، ڈاکٹر صدیق علی چشتی ، محمد محمود اعوان ، صاحبزادہ محمد جنید قادری ، پیر طارق، مولانا محمد شفیق امینی ، مولانا الحمد اللہ اور دیگر علماء کرام نے خطاب کر تے ہوئے کہا کہ قومی اسمبلی میں توہین رسالت ایکٹ میں ترمیم کی کو شش کی جا رہی ہے جس کو ناکام بنانا ہم سب کی ذمہ داری ہے ۔ آج ہمارے حکومت کے ساتھ ساتھ مسلم امہ ،افغانستان ، کشمیر اور بر ما کے مسلمانوں پر ڈھائی جانے والی ظلم اور بر بریت پر خاموش ہے جس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے ۔ گستاخان رسولﷺ کے پیچھے ایک بڑی قوت کار فر ما ہے اور ایک سازش کے تحت حضور پاک ﷺ کے شان میں غلط زبان اور قلم کا استعمال کیا جا رہا ہے جس کی وجہ سے عبدالولی خان یونیورسٹی جیسے واقعات رونما ہو رہے ہیں۔ مقررین نے دہشت گردی کے واقعات کی شدید الفاظ میں مذمت کی اور اولیاء کرام کے مزاروں پر دھماکوں میں بے گناہ انسانوں کے ضیاع پر افسوس کا اظہار کیا ۔ کانفرنس کے آخری نشست میں نماز فجر کے بعد حضور ﷺ کی موئے مبارک کا دیدار عام بھی کر ایا گیا ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر