حسن ابدال،10سالہ بچے کے قتل میں باپ،سوتیلی ماں کیخلاف مقدمہ درج

حسن ابدال،10سالہ بچے کے قتل میں باپ،سوتیلی ماں کیخلاف مقدمہ درج

حسن ابدال(تحصیل رپورٹر)تھانہ صدر کی حدود میں 10سالہ بچے کو قتل کے بعد جرم چھپانے کی کوشش! پولیس نے بروقت کاروائی کرتے ہوئے نعش قبضے میں لے لی۔سوتیلی والدہ اور والد کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق تھانہ صدر پولیس کی جانب سے درج مقدمے کے مطابق گذشتہ روز انچاج چوکی برہان عبدالرشید ایس آئی کو نا معلوم شخص کی جانب سے موبائل فون پر کال کر کے اطلاع دی گئی کہ نواحی گاوں تاس میں بشریٰ بی بی اور اس کے خاوند محمد سلیم ولد دلاو ر خان کی جانب سے اپنے بیٹے محمد ارسلان کو تشدد کے بعد گلے میں پھندا ڈال کر کنویں میں لٹکا کر قتل کر دیا گیا ہے جبکہ ملزمان کی جانب سے قتل کو چھپانے کے لیے بچے کو دفنانے کی تیاریاں کی جا رہی ہیں۔اطلاع ملتے ہی مقامی پولیس موقع پر پہنچ گئی اور بچے کی نعش کو قبضے میں لے لیا جس کے جسم پر تشدد جبکہ گلے میں پھندے کے نشانات موجود تھے۔بچے کی نعش کو فوری طور پر ٹی ایچ کیو ہسپتال حسن ابدال پہنچا دیا گیا جہاں اس کا پوسٹ مارٹم کرایا گیا۔جبکہ ملزمان کے خلاف ابتدائی رپورٹ درج کر کے تفتیش کا آغاز کر دیا گیا ہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر