باردانہ کی غیر منصافہ تقسیم پر ہنگامہ، تمبواکھاڑ دئیے، بااثر کو نوازنے کی شکایات

باردانہ کی غیر منصافہ تقسیم پر ہنگامہ، تمبواکھاڑ دئیے، بااثر کو نوازنے کی ...

قطب پور ‘ باگڑ سرگانہ ‘ ٹھٹھہ صادق آباد ‘ سلطان پور ‘ صادق آباد (نمائندگان ) باردانہ کی غیر منصفانہ تقسیم پر کاشتکاروں کی ہنگامہ آرائی جاری ‘ تمبو اکھاڑ دئیے گئے ‘ 300 جعلی زمینداروں مستاجروں کی لسٹ پکڑی گئی ‘ باردانہ بیوپاریوں اور بااثر افراد میں تقسیم پر کاشتکاروں نے خریداری سنٹرز کے گھیراؤ کی دھمکی دیدی ۔ اس سلسلے میں قطب پور سے نامہ نگار کے مطابق باردانے کی غیر منصفانہ تقسیم پر کاشتکاروں کی ہنگامہ آرائی کا دوسرے روز بھی سلسلہ جاری ۔تمبو اُکھاڑ کر دروازے تک توڑ ڈالے ۔اسسٹنٹ کمشنر ہیڈ کوارٹر انور عباس اور پولیس موقع پر پہنچ گئی ۔مذاکرات ،مساوی بنیادوں پر تقسیم کی یقین دہانی ۔مرکز گندم خرید قطب پور میں باردانے کی غیر منصفانہ تقسیم پر کاشتکاروں نے احتجاج کرنا شروع کر دیا ۔اس دوران کمرے کا دروازہ توڑنے کے بعد تمبو اُکھاڑ ڈالے ۔کاشتکاروں محمد اکرم ،دستگیر ،رانا رمضان ،اختر علی نمبردار ،محمد اشفاق ،شیر علی ،شاہ علی و دیگر نے الزام لگایا کہ پٹواریوں نے بھاری نذرانے لے کر مڈل مینوں کے نام کشتیں درج کیں ۔اور اب فوڈ عملہ بھی ملی بھگت کرتے ہوئے اپنے چہیتوں کو باردانہ ترجیح بنیادوں پر دے رہا ہے ۔انہوں نے حکومت کی ناقص پالیسیوں پر بھی سخت تنقید کی اور کہا کہ سارا سارا دن دھکے کھانے کے بعد بھی نمبر نہیں لگتا ۔اس سے بہتر تھا کہ مڈل مینوں کو ہی باختیار کر دیا جاتا ۔ہماری ہزاروں من گندم کھلے آسمان تلے پڑی ہے ۔دریں اثنا ء اسسٹنٹ کمشنر انور عباس نے موقع پر پہنچ کر کاشتکاروں کا یقین دہانہ کروائی کہ وہ صبر و تحمل کا دامن نہ چھوڑیں ہر شخص کو میرٹ پر باردانہ فراہم کیا جائیگا ۔ باگڑ سرگانہ سے نمائندہ پاکستان کے مطابق گندم خریداری بروقت شروع نہ ہونے سے چھوٹے کاشتکاراور کسان ایک بار پھر بیوپاریوں کے رحم و کرم پر کسان اپنی گندم اونے پونے فروخت کرنے پر مجبور آڑھتی 12سوروپے کے حساب سے گندم خرید کررہے ہیں جس سے چھوٹا کسان حکومت کے مقرر کردہ ریٹ کا فائدہ اٹھانے میں کامیاب نہ ہوسکا اور ہمیشہ کی طرح اس بار بھی بیوپاریوں کے ہاتھوں لٹنے پہ مجبور ہو گیا۔ ٹھٹھہ صادق آباد سے نمائندہ پاکستان کے مطابق ڈسٹرکٹ فوڈ کنٹرولر خانیوال احمد جاوید کی ہدایت پر فوڈ سنٹر ٹھٹھہ صادق آباد پر باردانہ کے اجراء کے لئے گزشتہ رو ز فوڈ سنٹر ٹھٹھہ صاد ق آباد کے ایریا میں موجود چکوک کسانوں سے پہلے آئیے پہلے پائیے کی بنیادپر درخواستیں وصول کی گئیں،سنٹر کوآڈینٹر ڈاکٹر محمدشریف کی طرف سے کسانوں سے درخواستیں وصول کی گئیں،فوڈ سنٹر ٹھٹھہ صادق آباد پر کسانوں کی سہولت کے لئے مارکیٹ کمیٹی جہانیاں کی طرف سے سایہ کیلئے شامیانہ کرسیاں رکھی گئیں جوکہ ناکافی تھیں جبکہ پانی کا بھی کو ئی بندوبست موجود نہ تھا،اسسٹنٹ کمشنر جہانیاں عمران عصمت،تحصیلدار جہانیاں سید توقیر حسین شاہ نے فوڈ سنٹر ٹھٹھہ صادق آباد کا دورہ کیا،اور انتظامات کا جائزہ لیتے ہوئے کسانوں سے مسائل دریافت کیے گئے۔ سلطان پور سے نامہ نگار کے مطابق گندم کے حالیہ سیزن میں پنجاب گورنمنٹ حلقہ پٹواریوں کو ہدایت کی وہ محکمہ پاسکو کو خسرہ گرداوری کے مطابق باردانہ کی فراہمی کیلئے لسٹ جاری کریں جس پر موضع بیٹ برڑہ موضع غوث پور،موضع ماڑیاں کے پٹواری مولوی مشتاق احمد ماچھی نے علاقہ کے لوگوں سے ساز باز کرکے ایسے افراد کے ناموں کی لسٹ جاری کی جن کی ایک مرلہ بھی زمین نہیں نہ ہی ان کی کوئی کاشت ہے یہ افراد باردانہ حاصل کرکے کسی نہ کسی بیوپاری کوفروخت کرتے ہیں اور100روپے فی بوری رقم وصول کی جاتی ہے جس کیلئے پٹواری مولوی مشتاق ماچھی نے چند بیوپاریوں سے ملی بھگت کرکے ایک لسٹ جاری کی جوکہ ایڈوائزری کمیٹی کے انچارج سید طاہر رضا بخاری ایڈووکیٹ نے پکڑ لی اورتمام ممبران نے پاسکو انچارج بہار شاہ کو اس جعلی لسٹ پر باردانہ ایشو کرنے سے روک دیا جس پر انچارج نے بھی اپنے افسران کو رپورٹ جاری کرتے ہوئے بتلایا کہ جاری کردہ لسٹ جعلی ہے اورباردانہ روک دیا گیاایڈوائزری کمیٹی کے ممبرسید طاہررضا بخاری ایڈووکیٹ،ممبر ملک عبدالستار نے صحافیوں کو بتلایا کہ پٹواری نے انتہائی زیادتی کی ہے اور جعلسازی کرتے ہوئے ان لوگوں کے ناموں کی لسٹ جاری کی ہے جن کی کوئی زمین ہی نہیں ہم نے ایم پی اے عامر طلال گوپانگ اوراسسٹنٹ کمشنر علی پور عمران شمس کو رپورٹ کردی ہے کسی طرح بھی جعلی لسٹ پر باردانہ ایشو نہیں کرنے دیں گے انہوں نے کمشنر ڈیرہ،ڈپٹی کمشنر مظفرگڑھ سے فوری نوٹس لینے کا مطالبہ کیا۔رابطہ پر پٹواری مولوی مشتاق احمد ماچھی نے موقف اختیارکیاکہ ایک سیاسی آدمی کے دباؤ میں آکر میں نے جعلی ناموں کی لسٹ تیار کی میں اپنا جرم تسلیم کرتاہوں برحال آپ لوگ مہربانی کریں اورخبرنہ لگوائیں ورنہ میری نوکری چلی جائے گی ۔جبکہ رابطہ پر اسسٹنٹ کمشنر علی پور نے کہاکہ مجھے آج ہی معلوم ہواہے ہم پٹواری کے خلاف کاروائی کررہے ہیں علاوہ ازیں ایم پی اے عامر طلال گوپانگ نے کہاکہ کسی بھی طرح غیر مستحق لوگوں کو باردانہ نہیں دینے دیں گے پٹواری نے زیادتی کی ہے اورلالچ میں آکر جعلی ناموں کی لسٹ تیار کی ہے جس کے خلاف افسران کو کاروائی کی ہدایت کردی ہے۔ صادق آباد سے تحصیل رپورٹر کے مطابق محکمہ خوراک کے افسران اور عملہ با ردانہ کی کاشتکاروں کو تقسیم کی بجائے بیوپاریوں اور با اثر شخصیات کو تقسیم کر رہا ہے ضلعی انتظامیہ اور محکمہ فوڈ کے افسران کاشتکاروں کی شکایات کے ازالہ کی بجائے خاموش تماشائی کا کردارادا کر رہے ہیں حکومت پنجاب کاشتکاروں کے بد ترین استحصال میں شریک ہے وزیراعلی پنجاب فوری طور پر کاشتکاروں کی شکایات کا نوٹس لیں ورنہ کاشتکارانتظامیہ کے افسران کے دفتروں اور خریداری سنٹروں کا گھیراؤں اور احتجاج پر مجبور ہوں گے ان خیالات کا اظہارحافظ سعید مصطفی چدھڑ‘ حاجی سلطان احمد‘ قمر اقبال‘ محمد احمد‘ عبدالستار‘ نعمان خان ‘ فقیر بخش‘ نور الہی ‘ محمد جاوید ‘ ندیم حسین ودیگر نے اخبا رنویسوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

ملتان ‘ خانیوال‘ عبدالحکیم ‘ساہوکا ‘ بہاولپور ‘ خانقاہ شریف ‘ ڈیرہ غازیخان ‘ راجن پور ‘ ہارون آباد ( خبر نگار ‘ نمائندگان ) ملتان سمیت مختلف اضلاع کے ڈپٹی کمشنرز کے زیر صدارت اجلاس ‘ گندم خریداری مراکز کے معائنے صوبائی وزیر جیل خانہ جات احمد یار ہنجرا کا ہارون آباد سنٹر کا دورہ ‘ انتظامات کا جائزہ لیا ۔ اس سلسلے میں ملتان سے خبر نگار کے مطابق ڈپٹی کمشنر ملتان ڈویژن نا در چٹھہ نے کہا ہے کہ حکومت پنجا ب کی ہدایات پر ضلع ملتا ن کے 17 گند م خریدا ری مراکز پر با ر دا نہ کی فر اہمی کا آ ج سے آ غاز کیا جا ئے گا ۔پہلے آ نے کی بنیاد پر 10 بیگ فی ایکٹر کے حسا ب سے سنٹر کو آرڈینیٹر کاشتکا رو ں کو با ر دا نہ اور ٹو کن فر اہم کر ینگے ۔انہوں نے کہا کہ رواں سا ل گرد اور ی اورا را ضی کی فہر ستیں کمپیوٹرائزڈ نظا م کے تحت تشکیل دی گئی ہیں جس میں کسی غلطی کی گنجا ئش نہیں ۔اراکین اسمبلی اور کسا ن اتحا د کے نما ئندوں سمیت سر کا ری افسران پر مشتمل کمیٹیا ں ہر سنٹر پر کاشتکار و ں کی تصد یق کر ینگی ۔ان خیالا ت کا اظہا ر انہو ں نے گز شتہ روز سر کٹ ہا ؤ س میں منعقد ہ گند م خریدار ی مہم کے سلسلے میں اجلاس سے خطا ب کر تے ہوئے کیا ۔اسسٹنٹ ڈا ئریکٹر زر عی ما ر کیٹنگ آصف رضا اور ڈسٹر کٹ فوڈ کنٹرو لر محمد جاو ید بھی ان کے ہمراہ تھے ۔ خانیوال سے نمائندہ پاکستان کے مطابق حکومت پنجاب کی ہدایت پر ضلع خانیوال میں گندم خریداری مہم کا آغاز ہو گیاہے ۔ ڈپٹی کمشنر مظفر خان سیال نے مہم کے پہلے روز گندم خریداری سینٹر خانیوال اور جہانیاں کا اچانک معائنہ کیا اور وہاں پر کاشت کاروں کو باردانہ کے اجراء کے لیے وصول کی جانے والی درخواستوں کے عمل کی خود نگرانی کی۔ ڈپٹی کمشنر نے اس موقع پر سینٹر ز پر تعینات کوآرڈینٹرز اور دیگر عملہ کو ہدایت کی کہ باردانہ کے اجراء میں 100 فیصد میرٹ پر عمل درآمدکو یقینی بنایا جائے اور پہلے آیئے پہلے پائیے کی بنیا د پر بلا تفریق باردانہ جاری کیا جائے اور اس سلسلہ میں کسی قسم کا دباؤ ہرگزقبول نہ کیا جائے ۔ عبدالحکیم سے نمائندہ خصوصی کے مطابق پاسکو سنٹر نے گندم کے حصول کے لیے تمام کاشتکاروں سے درخواستیں وصول کر لی ہیں تا ہم حتمی لسٹ دو سے تین روز کے اندر آویزاں کر دی جائیں گی ، ان خیالات کا اظہار اسسٹنٹ کمشنر کبیروالہ طارق حسین بھٹی نے پاسکو سنٹر پر میڈیا نمائندوں اور کاشتکاروں سے بات چیت کے دوران کیا انہوں نے کہاکہ اس بار ہر کام میرٹ پر ہو گا اور کاشتکاروں کی مشکلات کو کم کیا جائے گا ہماری کوشش ہو گی کہ تمام کاشتکاروں کو باردانہ کے حصول اور گندم کے فوڈ سنٹر لانے میں کسی بھی قسم کی کوئی دشواری نہ ہو کاشتکاروں کو چاہیے کہ وہ عملہ کے ساتھ تعاون کریں ۔ ساہوکا سے نمائندہ پاکستان کے مطابق چیئر مین و وائس چیئر مین یو نین کو نسل56راجہ غلام نبی خان ساہوکا اور حاجی محمد اکرم خان بھٹی نے پاسکو سنٹر ساہوکا پر صحافیوں سے گفتگو کر تے ہو ئے کہا کہ پاسکو سنٹر ساہوکا کو 30ہزار باردانہ ملا ہے جس پر پاسکو انچارج فقیر محمد نے کمیٹی ممبران حاجی محمد اکرم بھٹی،محمد آفتاب خان ساہوکا ،راجہ عباس خان ساہوکا ،سید ریاست حسین شاہ اور ممبران کسان اتحاد نور احمد خان ساہوکا ،محمد منشاہ بھٹی سے میٹنگ کی اور ان کی مشاورت سے 5 بوری فی ایکٹر کے حساب سے باردانہ کوتقسیم کیا جارہا ہے اگرلسٹ کے حساب سے فی ایکڑ 8بوری دی جاتی تو کچھ کسان باردانہ سے محروم رہ جاتے اس لئے ہماری موجودگی میں کمیٹی ممبران کی مشاورت سے یہ فیصلہ کیا گیا کہ کسی بھی کسان کو باردانہ سے محروم نہ رکھا جائے اور ایمانداری سے باردانہ تقسیم کر کے کسانوں سے زیادہ سے زیادہ گندم خرید کی جائے گی۔ بہاولپور‘ خانقاہ شریف سے بیورو رپورٹ ‘ نامہ نگار کے مطابق ڈپٹی کمشنر بہاول پور رانامحمد سلیم افضل نے گندم خریداری مراکز خانقاہ شریف، نور پور اور مبارکپور کا اچانک دورہ کیا۔انہوں نے باردانہ کے اجراء وتقسیم کے عمل کی مانیٹرنگ کرتے ہوئے ہدایت کی کہ میرٹ اور شفافیت کو برقرار رکھنے کے لئے تمام تر اقدامات بروئے کار لائے جائیں۔انہوں نے فوڈ سنٹرز پرآنے والے کاشتکاروں کے لئے سایہ دار جگہ اور پینے کے ٹھنڈے پانی کی فراہمی کے لئے ہدایت کی ۔انہوں نے کہا کہ باردانہ کے اجراء میں کسی قسم کی بے قاعدگی برداشت نہیں کی جائے گی ۔ ڈیرہ غازی خان سے بیورو رپورٹ کے مطابق ڈی پی او سجاد حسین گجر کا آرپی سنٹر (مرکز خرید اری گندم ) وزٹ کیا اور سیکیورٹی انتظامات کو چیک کرتے ہوئے ملازمان پولیس اورSHOکو حکم دیا کہ باردانہ کی تقسیم کے دوران کی قسم کی کوئی بد نظمی پید ا نہیں ہونی چاہیے ۔ ڈی پی او نے کہا کہ جہاں بھی گندم خرید کے مراکز قائم کئے گئے ہیں وہاں پر لوگوں کا کافی رش ہوتا ہے وہاں پر SHOsخوداپنے تھانے کے علاقے میں موجود مراکز کو چیک کریں اور گشت کو موثر بنائیں ۔ راجن پور سے ڈسٹرکٹ رپورٹر کے مطابق اسسٹنٹ کمشنرراجن پور شاہد محبوب نے فاضل پور فوڈسنٹر پر کاروائی کرکے کسان سے رشوت وصول کر نے کے الزام میں فوڈ انسپکٹر فاضل پور عبدالرحیم طارق بھٹی کے بھا نجے کو گرفتار کر لیا تھا نہ فاضل پور کے حوالے کردیا گیا کسانوں سے زیادتی کسی صورت برداشت نہیں کی جائیگی اسسٹنٹ کمشنر کی صحا فیوں سے گفتگو تفصیلات کے مطابق گذشتہ تین روز کے دوران اسسٹنٹ کمشنر تینوں فوڈ سنٹرز فاضلپور،راجن پور اور کوٹ مٹھن کو نہ صرف خود ما نیٹر کررہے ہیں بلکہ اس دوران سنٹر پر گڑ بڑ کر نے ،رشوت وصول کر نے پر ابتک آٹھ افراد کو گرفتار کر کے اُن کے خلاف مختلف تھا نوں میں مقد مات درج کراچکے ہیں ۔ ہارون آباد سے نامہ نگار کے مطابق صوبائی وزیر جیل خانہ جات ملک احمد یار ہنجرا کا گندم خرید سنٹرہارون آباد کا دورہ انتظامات کا جائزہ لیا اور کاشتکاروں کے مسائل سنے ،ان کے ہمراہ اے ڈی سی ریونیو رانا امجد اور اسسٹنٹ کمشنر ہارون آباد محترمہ انجم زہرہ بھی تھیں اس موقع پر انہوں نے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ کاشتکاروں سے گندم کا ایک ایک دانہ خریدیں گے۔گندم کی خریداری مہم میں کاشتکاروں کو ہر ممکن سہولت کو یقینی بنایا جائے۔خریداری مہم میں کسی بددیانتی کو ہرگز برداشت نہیں کیا جائے گا اور حکومت پنجاب کی اس ضمن میں زیرو ٹالرینس پالیسی ہے۔ حکومت کی کسان دوست پالیسیوں کی بدولت گندم کی بہترین پیداوار ہوئی ہے اور کاشت کاروں کو گندم کے خریداری مراکز پر کسی مشکل کا سامنا نہیں ہونا چاہیے اجلاس میں محکمہ خوراک کے افسران نے بریفنگ دیتے ہوئے بتایاکہ ضلع بہاولنگر میں 23اپریل سے گندم کی خریداری کا آغاز کیاجارہا جس کے لیے باردانہ کی تقسیم اٹھارہ اپریل سے شروع ہوچکی ہے اور اب تک 10.5 فیصد (256126) بوری باردانہ تقیسم کی جاچکی ہے ۔

انتظامات جائزہ

مزید : ملتان صفحہ آخر