بھارت کے 13 دہشتگرد پاکستان داخلے کی کوشش کررہے ہیں، حکومت کا قانون نافذ کرنے والے اداروں کو الرٹ رہنے کا حکم

بھارت کے 13 دہشتگرد پاکستان داخلے کی کوشش کررہے ہیں، حکومت کا قانون نافذ کرنے ...
بھارت کے 13 دہشتگرد پاکستان داخلے کی کوشش کررہے ہیں، حکومت کا قانون نافذ کرنے والے اداروں کو الرٹ رہنے کا حکم

  

شیخوپورہ (ویب ڈیسک) بھارتی جاسوس کلبھوشن سنگھ یادیو کو سزائے موت کا حکم کے فیصلہ کے خلاف بھارت کی مودی سرکاری کے پیٹ میں نئے مروڑ اٹھ رہے ہیں اور انہوں نے کنٹر کے ضلع غازی آباد میں دہشتگردوں کا ایک اور تربیتی کیمپ کھول دیا ہے جہاں پر 13 دہشتگردوں کو مذموم منصوبے دے کر پاکستان میں داخل کرنے کی کوششیں کی جارہی ہیں۔

روزنامہ جنگ کے مطابق اس بارے میں حکومت نے قانون نافذ کرنے والے اداروں کو الرٹ کردیا ہے اور پنجاب میں بھی ممکنہ دہشتگردی کے تدراک کیلئے ہر سطح پر سکیورٹی ہائی الرٹ کردی گئی ہے۔ اخبار کے ذرائع کے مطابق حکومت کی طرف سے قانون نافذ کرنے والے اداروں کو آگاہ کیا گیا ہے کہ کالعدم تحریک طالبان مولوی فضل اللہ گروپ کی طرف سے پشاور، نوشہرہ اور لاہور میں بھارت کی خفیہ ایجنسی ”را“ این ڈی ایس کی مدد سے دہشتگردی کرسکتی ہے۔ غازی آباد میں بنائے گئے تربیتی کیمپ میں دہشتگردی کی تربیت پانے والے دہشتگردوں میں تین کا تعلق ازبکستان سے ہے جن میں اسرائیل، احمد شاہ اور شاہد اللہ شامل ہیں جبکہ دیگر دہشتگردوں میں امان اللہ، عبداللہ، محمد الکبیر، اسماعیل، فضل ربی، نثار، عبدالسلام اور امین اللہ شامل ہیں۔

فلپائن میں داعش کے اتحادی گروپ کا رہنماءمارا گیا

اخبار کے مطابق این ڈی ایس/ را نے فیصلہ کیا ہے کہ ان دہشتگردوں کو طورخم کی بجائے دیگر راستوں سے پاکستان میں جعلی ویزوں کے ذریعے داخل کیا جائے گا اور وہ انٹیلی جنس کے اداروں کے علاوہ پشاور میں کام کرنے والے امریکی قونصلیٹ کو بھی نشانہ بناسکتے ہیں اور ممکنہ طور پر نوشہرہ، لاہور کے کینٹ علاقوں میں بھی ممکنہ طور پر کارروائی کرسکتے ہیں۔ محکمہ داخلہ نے بتایا کہ دہشتگردوں کے مذموم منصوبوں کے بارے میں تھرٹ الرٹ 238 کے ذریعے تمام حکام کو آگاہ کردیا گیا ے اور ہدایت کی گئی ہے کہ ہر سطح پر دہشتگردوی کے تدراک کیلئے سخت ترین حفاظتی اقدامات کئے جائیں اور پنجاب سکیورٹی سٹیبلشمنٹ ایکٹ 2015ءپر بھی سختی سے عملدرآمد کیا جائے۔

مزید : شیخوپورہ