قومی اسمبلی اجلاس؛ فرانسیسی سفیر کی ملک بدری پر بحث نہ ہوسکی

قومی اسمبلی اجلاس؛ فرانسیسی سفیر کی ملک بدری پر بحث نہ ہوسکی
قومی اسمبلی اجلاس؛ فرانسیسی سفیر کی ملک بدری پر بحث نہ ہوسکی

  

اسلام آباد (ویب ڈیسک) قومی اسمبلی کا اجلاس شروع ہونے کے کچھ دیر بعد ہی ملتوی کردیا گیا اور فرانسیسی سفیر کی ملک بدری معاملے پر بحث نہ ہوسکی۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق  ڈپٹی سپیکر قاسم سوری کی زیر صدارت قومی اسمبلی کا اجلاس ہوا جس میں آج فرانسیسی سفیر کی ملک بدری معاملے پر بحث ہونی تھی تاہم ہنگامہ آرائی کے باعث بحث نہ ہوسکی۔

آغاز میں ہی اپوزیشن اراکین اپنے نشستوں پر کھڑے ہوگئے اور احتجاج شروع کردیا۔ انہوں نے نکتہ اعتراض پر بولنے کی اجازت دینے کا مطالبہ کیا اور بات کرنے کا موقع نہ دینے پر سپیکر ڈائس کا گھیراؤ کرلیا۔ مسلم لیگ ن، پیپلزپارٹی، جے یو آئی ف کے ارکان نے اسپیکر ڈائس کے سامنے احتجاج کیا۔ڈپٹی سپیکر نے ان سے کہا کہ وقفہ سوالات کے بعد آپ کو موقع ملے گا۔ لیکن پیپلز پارٹی اور ن لیگ نے وقفہ سوالات کا بائیکاٹ کردیا۔ اپوزیشن نے حکومت مخالف نعرے بازی کی جس سے ایوان مچھلی منڈی بن گیا۔ اپوزیشن ارکان نے لبیک یارسول اللہ اور تاجدار ختم نبوت کے نعرے بھی لگائے۔

اپوزیشن نے مطالبہ کیا کہ پہلے فرانس میں شائع گستاخانہ خاکوں سے متعلق قرارداد پر بات کرنے کی اجازت دی جائے۔ ڈپٹی سپیکر نے اسمبلی اجلاس غیر معینہ مدت کیلئے ملتوی کردیا۔آج کے اجلاس میں پاکستان پیپلز پارٹی نے بھی شرکت کی جس نے گزشتہ اجلاس میں شرکت نہیں کی تھی۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -