فراری نے بریک کام نہ کرنے پر چین سے اپنی 2 ہزار سے زائد گاڑیاں واپس منگوالیں

فراری نے بریک کام نہ کرنے پر چین سے اپنی 2 ہزار سے زائد گاڑیاں واپس منگوالیں
فراری نے بریک کام نہ کرنے پر چین سے اپنی 2 ہزار سے زائد گاڑیاں واپس منگوالیں
سورس: Pixabay.com (creative commons license)

  

شنگھائی\ میلان (ویب ڈیسک) اطالوی لگلژری گاڑیاں بنانے والی کمپنی فراری نے ممکنہ بریک مسائل پر چین سے اپنی 2 ہزار سے زائد گاڑیاں واپس منگوالیں۔رائٹرز کی رپورٹ کے مطابق چین کی سٹیٹ ایڈمنسٹریشن فار مارکیٹ ریگولیشن (ایس اے ایم آر) کے ایک نوٹس میں کہا گیا ہے کہ بریک آئل کی لیکیج کے مسئلے پر اطالوی کمپنی نے اپنی 2 ہزار 222 گاڑیوں کو واپس بلایا ہے۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق چینی ریگولیٹرز کا کہنا ہے کہ واپس منگوائی جانے والی گاڑیوں میں بریک لگانے کی کارکردگی کم ہونے یا بریک فیل ہونے کا امکان موجود تھا۔فراری کی جانب سے منگوائی گئی گاڑیوں کے ماڈل میں 458 اٹلی، 458 اسپیشل، 458 سپیشل اے، 458 اسپائیڈر، 488 جی ٹی بی اور 488 اسپائیڈر سیریز کی گاڑیاں شامل ہیں، جو مارچ 2010 سے مارچ 2019 کے درمیان بنائی گئی تھیں۔بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ ان گاڑیوں کو احتیاط کے ساتھ چلایا جانا چاہیے اور اگر بریک فلوئڈ لیول کی کم وارننگ لائٹ نظر آتی ہے تو انہیں فوری طور پر روک دیا جانا چاہیے۔ ان گاڑیوں کے جن پُرزوں میں مسئلہ ہوگا کمپنی کی جانب سے انہیں مفت تبدیل کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ فراری نے اس عرصے کے دوران چین، ہانگ کانگ اور تائیوان میں تقریبا 5 ہزار 400 گاڑیوں کو فروخت کیا ہے، فراری کی جانب سے اپنی گاڑیاں واپس بلانے کے بعد عالمی منڈی میں کمپنی کے حصص میں 3.1 فیصد گراوٹ ہوئی ہے۔اس سے قبل امریکی الیکٹرک کار کمپنی ٹیسلا نے چین سے تقریبا 1 لاکھ 20 ہزار سے ہزار گاڑیوں کو اسی خرابی پر واپس منگوانے کا اعلان کیا تھا۔

مزید :

سائنس اور ٹیکنالوجی -بزنس -