بلوچستان میں حکومتی رٹ نہ ہونے کے برابر ہے : چیف جسٹس

بلوچستان میں حکومتی رٹ نہ ہونے کے برابر ہے : چیف جسٹس
بلوچستان میں حکومتی رٹ نہ ہونے کے برابر ہے : چیف جسٹس

  

کوئٹہ (مانیٹرنگ ڈیسک ) چیف جسٹس سپریم کورٹ آف پاکستان افتخار محمد چوہدری نے کہاہے کہ بلوچستان میں حکومتی رٹ نہ ہونے کے برابر ہے ۔سپریم کورٹ کوئٹہ رجسٹری میں ڈاکٹر غلام رسول کے اغواءپر ازخود نوٹس کیس کی سماعت کے دوران چیف جسٹس نے اپنے ریمارکس میں کہا کہ حکومتی رٹ اسی وقت تسلیم کی جائے گی جب مغوی افراد تاوان دئیے بغیر بازیاب ہوں گے ۔

کیس کی سماعت چیف جسٹس نے اپنے چیمبر میں کی جس دوران سیکرٹری داخلہ بلوچستان نصیب اللہ خان بازئی ،آئی جی اور ڈی آئی جی پولیس نے چیف جسٹس کو ڈاکٹر غلام رسول کے اغواءاور بازیابی کے حوالے سے بریفنگ دی۔اس موقع پر چیف جسٹس کا کہنا تھاکہ بلوچستان میں حکومتی رٹ نہ ہونے کے برابر ہے جبکہ بی آرایس پی کے اہلکاروں کی بازیابی جس طریقے سے ہوئی ا س سے حکومتی رٹ کا بہتر اندازہ ہوتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ آئین اور قانون سے کوئی بالاتر نہیں جبکہ کوئی کتنا بھی بااثر کیو ں نہ ہو اس کے خلاف کارروائی کی جائے اور کیس کی مزید سماعت تین ستمبر تک کے لئے ملتوی کردی گئی۔

مزید : کوئٹہ /اہم خبریں