الزامات پر مبنی سیاست جمہوریت کے لئے نقصان دہ ہے،چودھری محمد سلیم

الزامات پر مبنی سیاست جمہوریت کے لئے نقصان دہ ہے،چودھری محمد سلیم
 الزامات پر مبنی سیاست جمہوریت کے لئے نقصان دہ ہے،چودھری محمد سلیم
کیپشن: 1

  

لاہور (بزنس رپورٹر) الزامات پر مبنی سیاست جمہوریت کے لئے نقصان دہ ہے، بے بنیاد الزامات کی بنیاد پر برپا کئے جانے والا احتجاج اور دھرنا سرا سر غیر آئینی ہے، جس سے ملکی معیشت کو اب تک تقریباً450ارب روپے کا نقصان ہو چکا ہے سٹاک مارکیٹ کریش ہو رہی ہے اور روپے کی قدر گِر گئی ہے جبکہ دوسری طرف دہشت گردی، معاشی بدحالی اور توانائی کے بحران نے مشکل صورت حال سے دوچار کر رکھا ہے ان خیالات کا اظہار امیدوار برائے پنجاب بار کونسل لاہور سیٹ اور ایڈووکیٹ لاہور ہائی کورٹ چودھری محمد سلیم نے روزنامہ ”پاکستان“ سے ایک خصوصی گفتگو میں کیا انہوں نے کہا کہ غیر ذمہ دار سیاسی جماعتوں اور افراد کے الزامات پر مبنی احتجاج اور دھرنے نے ملک کو عدم استحکام سے دوچار کر دیا ہے اس غیر ذمہ دارانہ احتجاجی سیاست سے اب تک ملکی معیشت کو تقریباً450ارب روپے سے زائد کا نقصان ہو چکا ہے انہوں نے مطالبہ کیا کہ450ارب روپے کا نقصان ان غیر ذمہ دار سیاست دانوں اور جماعتوں سے نیب کے ذریعے پورا کیا جائے تاکہ آئندہ کسی غیر ذمہ دار سیاست دان اور جماعت کو ایسا دھرنا اور مجمع اکٹھا کرنے کی جرا¿ت نہ ہو چودھری محمد سلیم نے کہا تمام سیاسی جماعتوں، حکومت اور مخالف فریقین کو وسیع تر ملکی مفاد کی خاطر تمام باہمی اختلافات مذاکرات کے ذریعے حل کرنے چاہئیں انہوں نے واضح طور پر کہا کہ موجودہ حالات کے تناظر میں اگر کسی جانب سے بھی کوئی ماورائے آئین اقدام، حل یا فارمولا پیش کیا گیا تو ملک بھر کی وکلاءبرادری اس کو ہرگز قبول نہیں کرے گی وکلاءنے ملک میں آئین اور قانون کی بالادستی کے لئے پہلے بھی قربانیاں دی ہیں اور آئندہ بھی وہ کسی قسم کی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے۔ چودھری محمد سلیم نے کہا کہ ہماری مسلح افواج دہشت گردی کے خلاف جنگ میں مصروف ہیں۔ ان حالات میں ہمیں اتحاد کی ضرورت ہے نا کہ انتشار کی۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -