بی اے ، بی ایس سی میں ناقص نتائج کے حامل سرکاری کالجوں کیخلاف کارروائی کا فیصلہ

بی اے ، بی ایس سی میں ناقص نتائج کے حامل سرکاری کالجوں کیخلاف کارروائی کا ...

  

                                         لاہور(ذکا ءا للہ ملک)محکمہ ہائر ایجوکیشن نے بی اے بی ایس سی 2014میں ناقص نتائج کے حامل سرکاری کالجز کے خلاف کاروائی کا فیصلہ کر لیا،غیر تسلی بخش نتائج کے حامل پبلک کالجز اور بی اے ،بی ایس سی سبجیکٹ میں نتائج کے تناسب سمیت کالجز کے فیکلٹی ممبران کی مکمل تفصیلات طلب کر لی گئی ہیں۔زرایع کے مطابق محکمہ تعلیم مطلوبہ نتائج کے حصول میںناکام ہونے والے کالجز کو شوکاز،جواب طلبی اور تبادلوں پر غور کرے گا۔بتایا گیا ہے کہ لاہور ڈویژن میں خاص طور پر بی اے اور بی ایس سی کے سالانہ امتحانات میں غیر تسلی بخش نتائج دینے والے سرکاری کالجز کا ریکارڈ طلب کیا گیا ہے جس کے بعد ان کالجوں کے خلاف محکمانہ کاروائی کا آغاز کیا جائے گا۔لاہور ڈویژن میں بیشتر ایسے کالجز ہیں جن کا عرصہ دراز سے انٹرمیڈیٹ سمیت بی اے اور بی ایس سی کے نتائج% 30 سے کم رہتے ہیں اور غیر تسلی بخش نتائج کے باعث محکمہ ایجوکیشن میں تشویش پائی جاتی ہے۔اس حوالے سے لاہور کے 47،قصور کے 8،ننکانہ کے 9،شیخوپورہ کے 12کالجز سمیت 89سرکاری کالجز کے نتائج کا ریکارڈ اکٹھا کیا جا رہا ہے،اس ٹاسک کےلئے ڈائریکٹر کالجز لاہور ڈویژن سمیت اہم افسران کو طلب کیے جانے کا امکان ہے تاکہ وہ تمام پبلک کالجز میں بی اے بی ایس سی کے نتائج کی تفصیلات ، اساتذہ کے سروس ریکارڈ سمیت تعلیمی اداروں کی تمام انفارمیشن محکمہ تعلیم کو جلد از جلد کریں اور محکمہ ہائر ایجوکیشن باضابطہ کاروائی کا آغاز کیا جا سکے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -