گجر پورہ کی بھتہ خوری نے دکاندار کا جینا حرام کر دیا

گجر پورہ کی بھتہ خوری نے دکاندار کا جینا حرام کر دیا

  

                                   لاہور(کرائم سیل) تھانہ گجر پورہ پولیس اہلکاروں نے مین گجرپورہ بازار کے دکانداروں سے دیہاڑیاں لگانا شروع کر دیں۔پولیس کی جانب سے بڑھتی ہوئی مبینہ طور پربھتہ خوری سے تنگ آچکے ہیںپولیس حکام نوٹس لیں، دکانداروں کا موقف۔تفصیلات کے مطابق تھانہ گجر پورہ کے پولیس اہلکاروں نے گجر پورہ بازار کے دکانداروں کا جینا حرام کر دیا ہے اور پان سگریٹ ،پرچون اور فاسٹ فوڈ کی دکانوں سے مفت میں سامان لینا اپنا وطیرہ بنا لیا ہے۔دکاندار مبشر ریاض،نعیم اختر اور ایک واقعہ کے عینی شاہد محمود علی نے نمائندہ" پاکستان" کو بتایا کہ پولیس اہلکار خرم،لیاقت وغیرہ بازار میں موجود کھانے پینے کے سامان کی دکانوں اور پرچون فروشوں سے مفت سامان لے کر جاتے ہیں اور اگر ان سے پیسے مانگے جائیں تو انہیں دکان بند کرنے کی دھمکیاں دیتے ہیں پولیس کی جانب سے اس بھتہ خوری نے ہمیں نہایت

 پریشان کر رکھا ہے اور پورے دن میں ہم جتنا بھی کماتے ہیں وہ پولیس اہلکار مفت سامان کی مد میں لے جاتے ہیں۔پولیس حکام سے اپیل ہے کہ اس حوالے سے ہماری داد رسی کی جائے۔اس حوالے سے تھانہ گجر پورہ میں رابطہ کیا گیا تو انہوں نے بتایا کہ ہمارا کوئی اہلکار بھی ایسی سرگرمی میں ملوث نہیں ہے اگر کوئی دکاندار پولیس اہلکاروں سے تنگ ہے تو وہ تھانہ میں رپورٹ کرے ہم مکمل قانونی کارروائی کریں گے۔

مزید :

علاقائی -