خواتین کو ریپ سے بچانے والی نیل پالش متعارف

خواتین کو ریپ سے بچانے والی نیل پالش متعارف
خواتین کو ریپ سے بچانے والی نیل پالش متعارف
کیپشن: nail polish

  

بوسٹن (نیوز ڈیسک) امریکہ اور یورپ میں خواتین کو ملاقات کیلئے بلا کر جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے کا جرم شدت اختیار کرچکاہے اور طلباءنے خواتین کو اس سے بچانے کیلئے ایسی نیل پالش ایجاد کرلی ہے جو جنسی زیادتی کا ارادہ رکھنے والوں کو بے نقاب کردے گی۔ نارتھ کیرولینا یونیورسٹی کے چار طلباءٹائلر، سٹیفن، انکیش اور ٹاسو نے "undercover colors" نامی ایسی نیل پالش ایجاد کرلی ہے جو مشروبات میں ملائی گئی نشہ آور ادویات کا پتا چلا سکے گی۔

مٹیریل سائنس اینڈ انجینئرنگ کے طلباءکا کہنا ہے کہ ڈیٹ ریپ (ملاقات کیلئے بلا کر جنسی زیادتی کا نشانہ بنانا) کے اکثر واقعات میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ خواتین کو ایسا مشروب پلادیا جاتا ہے جس میں نشہ آور ادویات ہوتی ہیں تاکہ وہ مزاحمت نہ کرپائیں۔ جنسی زیادتی سے بچانے والی نیل پالش میں ایسے کیمیکل شامل کئے گئے کہ جو مشروب میں شامل مشکوک ادویات کو پکڑ سکتے ہیں۔

اس مقصد کیلئے خاتون کو اپنی انگلی مشروب میں ڈبوناہوگی اور اس میں مشکوک ادویات شامل ہونے کی صورت میں نیل پالش کا رنگ بدل جائے گا جس سے خاتون ممکنہ خطرے سے آگاہ ہو جائے گی۔

طلباءنے اس پراڈکت کو مزید بہتر بنانے کیلئے فنڈ جمع کرنا شرع کردیا ہے۔ اخبار واشنگٹن پوسٹ کے ایک تجزیے کے مطابق 2012ءمیں امریکی کالجوں میں ڈیٹ ریپ کے تقریباً 4000 واقعات ہوئے اور اب اس میں 50 فیصد اضافہ کے ساتھ یہ تعداد 6000 سالانہ تک پہنچ چکی ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -