دینی جماعتیں اسلامی شقوں کو ختم نہیں ہونے دے گیں، حافظ عبدالغفار روپڑی

دینی جماعتیں اسلامی شقوں کو ختم نہیں ہونے دے گیں، حافظ عبدالغفار روپڑی

لاہور( ایجوکیشن رپوٹر ) جماعت اہلحدیث پاکستان کے امیر حافظ عبدالغفار روپڑی اورپنجاب امیر حافظ عبدالوحید شاہد روپڑی نے کہا ہے کہ آئین میں موجود اسلامی شقوں کے خاتمے کے لئے ن لیگ پیپلز پارٹی اور پی ٹی آئی سمیت تمام جماعتیں ملی ہوئی ہیں،دینی جماعتیں اسلامی شقوں کو ختم نہیں ہونے دے گی،آپریشن رد الفساد کا رخ گستاخ بلاگرز کی طرف بھی کیا جائے،گستاخ رسول بھی دہشت گردوں کی میں کھڑا ہے ملک میں اہم عہدوں پرتعینات قادیانیوں کوا ن کے عہدوں سے ہٹایا جائے اور جو بھی ملک ان بلاگرز اور قادیانیوں کی پشت پناہی کررہا ہے اس کے سفیر کو سفیر کو ملک بدر کیا جائے،فسادیوں گستاخ رسول اور دہشت گردوں کے لئے پاکستان میں کوئی جگہ نہیں، حکومت بھی ہوش کے ناخن لے ،ملک میں اسلام دشمن اور ان کے آلہ کار دندناتے پھر رہے ہیں،عدالتی حکم کے باوجود بلاگرز کو بیرون ملک بھاگنے کا موقع دیا حکمرانوں پر سوالیہ نشان ہے،ان خیالات کا اظہار انہوں نے گذشتہ روز ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اس موقع حافظ عبدالوھاب روپڑی،مرکزی سیکرٹری اطلاعات مولانا شکیل الرحمن ناصر،مولانا محمد بشیر سلفی،حافظ امتیاز، مولاناشاہد محمود جانباز سمیت دیگر بھی موجود تھے،حافظ عبدالغفار روپڑی نے مزید کہا کہ بلاگرز پر بنائی گئی تحقیقاتی کمیٹی میں شامل قیادیانی افسر کو ہٹا یا جائے،اور کسی محب وطن افسر کو کمیٹی میں شامل کیا جائے،انہوں نے کہا کہ ناموس رسالتﷺ کی نگہبانی ہر مسلمان کا ایمانی فرض ہے۔

Ba

مزید : میٹروپولیٹن 1