خادم اعلیٰ کے پنجاب میں ایمبولینس ندارد،غریب کی لاش موٹر سائیکل ریڑھے پر رلتی رہی

خادم اعلیٰ کے پنجاب میں ایمبولینس ندارد،غریب کی لاش موٹر سائیکل ریڑھے پر ...

مظفرگڑھ‘ چوک مکول (نمائندہ پاکستان‘ نامہ نگار) یہ ہے خادم پنجاب کا پنجاب جہاں مرنیوالے کے لیے ایمبولینس کی سہولت تک موجود نہیں، مظفرگڑھ میں پولیس کی جانب سے نامعلوم لاش کی بیحرمتی کی گئی، لاش کو 20 کلومیٹر دور ہسپتال ایمبولینس پر منتقل کرنے کی بجائے رکشہ ریڑھی پر بھیج دی، شدید گرمی میں لاش ہسپتال پہنچانے والے ریڑھی مالک کو کرایہ تک ادا نہ کیاگیا. تفصیل کے مطابق مظفرگڑھ کے تھانہ خان گڑھ کی حدود بستی صدیق آباد نالے سے نامعلوم شخص کی نعش برآمد ہوئی، پولیس نہ پہنچی تو لاش کو مقامی افراد نے اپنی مدد آپ کے تحت نالے سے نکالا،لاش نکالنے کے کافی دیر بعد پولیس تھانہ خانگڑھ موقع پر پہنچی.پولیس نے ایمبولینس پر لاش ہسپتال منتقل کرنے کی بجائے موٹرسائیکل ریڑھے والے کو روکا اور اس کے ریڑھے پر زبردستی لاش لاد دی،ریڑھے پر لاش کو پہلے تھانہ خانگڑھ لے جایاگیا بعدازاں پولیس آفیسران کی جانب سے ریڑھے والے کو لاش ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر ہسپتال منتقل کرنے کا حکم ملا، جس کے بعد ریڑھے پر لاش کو 20 کلومیٹر دور ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر ہسپتال منتقل کیا گیا،ریڑھاڈرائیور ناصر لاش لیکر ہسپتال پہنچا تو ہسپتال میں بھی کوئی لاش وصول کرنے کو تیار نہ تھا اور کافی دیر بعد پولیس ہسپتال پہنچی، اور تین گھنٹے سے زیادہ لاش مردہ گھر کے باہر ہی پڑی رہی، دوسری جانب پولیس کی جانب سے ریڑھے مالک کو کرایہ تک ادا نہ کیا گیا۔

ایمبولینس

مزید : کراچی صفحہ اول