طب کے طالبعلوں کی سنی گئی ،قومی طبی کونسل اور ہائیر ایجوکیشن کمیشن میں اعلیٰ تعلیمی معاہدہ طے پاگیا

طب کے طالبعلوں کی سنی گئی ،قومی طبی کونسل اور ہائیر ایجوکیشن کمیشن میں اعلیٰ ...
طب کے طالبعلوں کی سنی گئی ،قومی طبی کونسل اور ہائیر ایجوکیشن کمیشن میں اعلیٰ تعلیمی معاہدہ طے پاگیا

  

اسلام آباد (مشرف زیدی سے ) طبی معیار تعلیم کو دور حاضر کے تقاضوں سے ہم آہنگ کرنے اور طبی تعلیمی اداروں کو جدید ذرائع تعلیم سے روشناس کرانے نیز طبی تعلیم کو اکیڈمک تعلیم کے مساوی قرار دلوانے کے لیے نیشنل کونسل فار طب اور ہائیر ایجو کیشن کمیشن باہمی تعاون کے معاہدہ (MOU) کے مسودے پر اتفاق ہوگیاہے۔ معاہدہ کے نقاط پر غور و خوض کے لیے نیشنل کونسل فار طب کے دفتر 5 جی ، شارع دستور اسلام آباد میں صدر قومی طبی کونسل کی صدارت میں ایک اجلاس منعقد ہوا۔ جس میں حکیم رضوان حفیظ ملک سابق صدر قومی طبی کونسل ‘ چیئرمین امتحانی کمیٹی حکیم محمداحمدسلیمی اورہائیر ایجوکیشن کمیشن کے وفد نے شرکت کی۔ ترجمان قومی طبی کونسل نے معاہدہ کے اہم نقاط بیان کرتے ہوئے کہا کہ ہائیر ایجو کیشن کمیشن اور نیشنل کونسل فار طب اس امر پر متفق ہیں کہ نیشنل کونسل فار طب ، ہائیر ایجو کیشن کمیشن کی مشاورت سے طب کے انڈر گریجوایٹ اور پوسٹ گریجوایٹ پروگرام کے نصاب ، فیکلٹی کی تقرری اور طب کے پروگرام کے لیے معیارات کا تعین کرے گی ۔ نیشنل کونسل فار طب ایک کمیٹی تشکیل دے گی جس میں نیشنل کونسل فار طب اور ہائیر ایجو کیشن کمیشن کے نمائندگان نیز معروف اطباء بھی شامل ہونگے۔ یہ کمیٹی ایکریڈیشن باڈی کے طور پر کام کرے گی۔ اس کے علاوہ ہائیر ایجو کیشن کمیشن(HEC) ، نیشنل کونسل فار طب(NCT) کی کمیٹی کی جانب سے تجویز کردہ پروگرام کو ہی ایکریڈیٹ کرے گی۔ اس کے علاوہ ہائیر ایجوکیشن کمیشن شعبہ طب یونانی کی بہتری اور تحقیق و ترقی کے لیے ایک سینٹر آف ایکسیلینس بھی قائم کرے گا۔ HEC طب یونانی‘ مشرقی کے گریجوایٹس کے لیے دوسرے شعبوں کی طرح بیرون ممالک میں اعلی تعلیم کے لیے سکالر شپ مہیا کرے گی۔

مزید : لاہور