امریکی صدر کا بیان کھلی دھمکی،بھارت کو علاقے کاچودھری بنانے سے خطے میں طاقت کا توازن بگڑ جائے گا:عبد الغفور حیدری

امریکی صدر کا بیان کھلی دھمکی،بھارت کو علاقے کاچودھری بنانے سے خطے میں طاقت ...
امریکی صدر کا بیان کھلی دھمکی،بھارت کو علاقے کاچودھری بنانے سے خطے میں طاقت کا توازن بگڑ جائے گا:عبد الغفور حیدری

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)جمعیت علمائے اسلام ف نے امریکی صدر کے بیان کو کھلی دھمکی قرار دیا ہے اور حکومت سے مطالبہ کرتے ہوئے کہاہے کہ امریکی صدر کے اس بیان کو سنجیدگی سے لے کربھر پور اور موثر جواب دیا جائے۔

تفصیلات کے مطابق ڈپٹی چیئرمین سینیٹ مولانا عبدالغفورحیدری نے کہاہے کہ امریکی صدر کے بیان نے جے یو آئی کے موقف کو سچا ثابت کر دیا ہے کہ امریکہ کسی کادوست نہیں بلکہ اپنے مفادات کا دوست ہے، امریکہ ہندوستان کو افغانستان میں پاکستان کے خلاف استعمال کرنا چاہتا ہے ، اسے بدنامی اور رسوائی کے سو اکچھ ہاتھ نہیں آئے گا، امریکی حکام نے ہمیشہ دھوکہ دیا جس کا اظہار متعدد بار ہوچکا ہے،بھارت کو علاقے کاچودھری بنانے سے خطے میں طاقت کا توازن بگڑ جائے گا۔انہوں نے کہا کہ امریکہ افغانستان میں بری طرح پھنس چکا ہے اور اب اسے واپسی کا راستہ بھی نظر نہیں آرہا، 16سال تک جس جنگ کی ٹرمپ نے مخالفت کی، اسے دوبارہ شروع کرکے امریکی صدر نے شرمناک یو ٹرن لے لیا ہے۔انہوں نے کہاکہ امریکہ کی نئی افغان پا لیسی پر بھارت کا خیر مقدم کا بیان ثابت کرتا ہے کہ امریکہ نے نئی افغان پالیسی بھی بھارت کو خوش کر نے کے لیئے دی ہے۔انہوں نے کہاکہ پاکستان نے ہمیشہ دہشت گر دی کی مذمت کی ہے لیکن پھر بھی پاکستان کو گھسیٹا جارہا ہے ،حکومت اس بیان کا سختی سے نوٹس لے اور امریکہ سفیر کو وزارت خارجہ میں طلب کر کے احتجاج ریکارڈ کرائے ، حکومت کو اپنی خارجہ پالیسی کا قبلہ درست کر نے کی ضرورت ہے، امریکہ افغانستان میں اپنی ناکامی کاملبہ پاکستان پرڈالناچاہتاہے، امریکہ کی پالیسیوں سے ہی دنیا میں دہشت گر دی کو تقویت ملی ہے،دہشت گردوں پر حملے کا اعلان مستقبل کی بڑی وارننگ ہے، حکومت کو اب اپنی حکمت عملی کو تبدیل کر نا ہو گا اور امریکہ کو دوٹوک جواب دینا ہو گا کہ ملکی سا لمیت پر پوری قوم ایک ہے۔

مزید :

قومی -