ٹیکسی میں سفر کے دوران لڑکی کے قتل کا معمہ حل نہ ہو سکا

ٹیکسی میں سفر کے دوران لڑکی کے قتل کا معمہ حل نہ ہو سکا

  

لاہور(کرائم رپورٹر سے)لاہور میں آن لائن ٹیکسی سروس میں لڑکی کے قتل کا سراغ نہ لگایاجاسکا۔ پولیس نے مقتولہ کی سہیلی سمیت دو افراد کو حراست میں لے لیا۔ بیٹی کے قاتلوں کو گرفتار کیا جائے۔والد نے سٹیزن پورٹل پر پولیس کے خلاف شکایت درج کرادی۔ لاہور میں آن لائن ٹیکسی سروس میں لڑکی کا قتل پولیس کے لئے معمہ بن گیا۔ والد نے تفتیش کو ناقص قرار دے کر سٹیزن پورٹل سے رجوع کرلیا۔پولیس کے مطابق واقعہ دس اگست کو بند روڈ پر پیش آیا۔ ملتان روڈ سے رائیڈ بک کرانے والی آمنہ حسین کو بند روڈ پر دن دیہاڑے فائرنگ کرکے قتل کیاگیاتھا، قاتل کون ہے؟ پولیس تاحال تعین نہ کرسکی۔مقتولہ آمنہ اپنی بہن کے ساتھ بوتیک چلارہی تھیں،والد کا کہنا ہے کہ کس سے کوئی دشمنی نہیں،پولیس نے مقتولہ کی قریبی دوست سمیت دو افراد کو تفتیش کے لیے حراست میں لے لیا۔ لیکن تفتیش دس روز بعد بھی مکمل نہ کی جاسکی۔پولیس کے مطابق ملزم لڑکی کے قتل کے بعد اسکا موبائل بھی ساتھ لے گئے تھے جس کی وجہ سے تحقیقات میں مشکلات پیش آ رہی ہیں، مختلف پہلوؤں پر تفتیش جاری ہے جلد ملزمان کو گرفتار کر لیا جائے گا۔

مزید :

علاقائی -