مہمند ڈیم 2024ء تک مکمل، 800میگاواٹ سستی بجلی پیدا ہو گی، وزارت آبی وسائل 

مہمند ڈیم 2024ء تک مکمل، 800میگاواٹ سستی بجلی پیدا ہو گی، وزارت آبی وسائل 

  

اسلام آباد (اے پی پی) مہمند ڈیم پن بجلی  منصوبے پر کام تیزی سے جاری  ہے اور منصوبہ 2024 ء  تک مکمل ہو جائے گا۔ وزارت آبی وسائل کے ذرائع کے مطابق  پی سی ون کے تحت اس منصوبے پر لاگت کا تخمینہ  291 ارب روپے ہے اور اس کی تکمیل میں  پانچ سال لگیں گے۔  منصوبے کے لیے واپڈا67 فیصد فنڈز فراہم کرے گا جبکہ باقی  رقم وفاقی حکومت ادا کرے گی۔ مہمند ڈیم کی تکمیل سے علاقے میں 12 لاکھ ایکڑ سے زائد اراضی کو سیراب کیا جاسکے گا  جبکہ اس سے 800 میگاواٹ سستی بجلی  پیدا ہوگی۔  اس منصوبے کی تکمیل سے پشاور، چارسدہ  اور نوشہرہ میں سیلاب  کے خطرے کو  بھی کم کرنے میں مدد ملے گی۔منصوبے پر کام تیزی کے ساتھ جاری  ہے اور  واپڈا حکام نے منصوبہ بروقت مکمل کرنے کیلئے دن رات موثر نگرانی اور شفاف طریقے سے کام کو آگے بڑھانے کے لئے خصوصی اقدامات کیے ہیں۔ مہمند ڈیم منصوبہ  تربیلا اور منگلا کے  بعد ملک میں  پن بجلی کی پیداوار کا تیسرا بڑا منصوبہ ہے جسے بروقت مکمل کرنے کے لیے حکومت کو نے خصوصی ہدایات جاری کی ہیں۔ اس منصوبے  کی تکمیل سے ملک میں توانائی کی صورتحال میں مزید بہتری آئے گی اور سستی بجلی کا حصول ممکن بنایا جاسکے گا۔

مزید :

کامرس -