جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے معاملہ پر باہمی سرد جنگ کوجلد ختم ہونا چاہیے:جہانگیر ترین

جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے معاملہ پر باہمی سرد جنگ کوجلد ختم ہونا چاہیے:جہانگیر ...
جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے معاملہ پر باہمی سرد جنگ کوجلد ختم ہونا چاہیے:جہانگیر ترین

  


ملتان(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان  تحریک انصاف کے رہنما جہانگیر ترین نے کہا ہے کہ  جنوبی پنجاب صوبہ سیکرٹریٹ کے معاملہ پر تحریک انصاف کے رہنماوں کے درمیان سرد جنگ جاری ہے جسے جلد ختم ہونا چاہیے، سرد جنگ کی وجہ سے جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ نہیں بن سکا،مل بیٹھ کر معاملات کو حل کرنا چاہئیے،بطور وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے بہت اچھا کام کیا،عمران خان کے ٹرمپ کے ساتھ اچھا تعلق ہے،صدر ٹرمپ مسئلہ کشمیر پر ثالثی کا کردار ادا کررہے ہیں۔

ملتان میں سی سی آر آئی میں منعقدہ اجلاس میں شرکت کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے جہانگیر ترین کا کہنا تھا کہ زراعت کے حوالے  سےتحقیق اور ریسرچ  پر کسی نے توجہ نہیں دی، گذشتہ دس سالوں میں زراعت کو تباہ کردیا گیا، اب زراعت تحریک انصاف حکومت کی اولین ترجیح ہے، اپٹما، جیننگ ایسوسی ایشن اور ماہرین کے ساتھ مل کر کپاس کے لئے کام کررہے ہیں،اس سال مسلسل مانیٹرنگ کی وجہ سے کپاس کی بہترین پیداوار ہوگی۔جہانگیر ترین کا کہنا تھا کہ چینی ان کی وجہ سے مہنگی نہیں ہوئی،تسلیم کرتے ہیں کہ مہنگائی بہت بڑھ گئی ہے،حکومت کو مجبورا آئی ایم ایف کے پاس جانا پڑا، بہت مشکل فیصلے کئے ہیں، حکومت عوام کو ریلیف دینے کے لئے کوشاں ہیں جلد ہی عوام کو نتائج نظر آنا شروع ہو جائیں گے۔جہانگیر ترین نے ملک میں ادویات کے مہنگا ہونے کا اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ اس میں کوئی شک نہیں ہے کہ دوائیاں مہنگی ہو گئی ہیں اور اس کی وجہ  یہ ہے  کہ روپے کی قدر گر گئی ہے اور ڈالر مہنگا ہو گیا ہے، پاکستان میں ادویات کی فیکڑیاں زیادہ لگنی چاہئیں تاکہ ہم اس مہنگائی پر  قابو پا سکیں ۔اس  موقع پر جہانگیرترین نے لودھراں میں گیس پائپ لائن، سائنس اینڈ کمپیوٹر لیب کا افتتاح کرتے ہوئے  پبلک سکول میں کالج کلاسز کیلئے 1 کروڑ روپے کا اعلان بھی کیا۔

مزید : علاقائی /پنجاب /ملتان


loading...