جنرل ہسپتال میں ایم آر آئی ٹیسٹ کے اوقات کار میں اضافہ

جنرل ہسپتال میں ایم آر آئی ٹیسٹ کے اوقات کار میں اضافہ

  

لاہور(جنرل رپورٹر)پرنسپل پوسٹ گریجویٹ میڈیکل انسٹی ٹیوٹ وجنرل ہسپتال پروفیسر ڈاکٹرسردار محمد الفرید ظفر اور ایگزیکٹو ڈائریکٹر پنجاب انسٹی ٹیوٹ آف نیورو سائنسز پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود نے مریضوں کے بہتر سے بہتر علاج معالجے اور مفاد میں اہم فیصلہ کرتے ہوئے ایم آر آئی ٹیسٹ کے اوقات کار میں اضافہ کر دیا ہے اور اب انسٹیٹیوٹ میں یہ ٹیسٹ صبح 8سے رات12بجے تک کرائے جا سکیں گے۔اس سلسلے میں ٹیکنیشنز و دیگر ٹیکنیکل سٹاف کی ڈیوٹیاں بھی لگا دی گئی ہیں جو تین شفٹوں میں اپنے فرائض سر انجام دیں گے اور ان احکامات پر فوری عملدرآمد ہوگا۔اس حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے پرنسپل پی جی ایم آئی اور ایگزیکٹو ڈائریکٹر پنز کا کہنا تھا کہ اس فیصلے سے ایم آر آئی کروانے والے زیادہ سے زیادہ مریض مستفید ہو سکیں گے۔

 اور برو قت تشخیص سے ان مریضوں کے علاج معالجے میں تاخیر کا ازالہ ہو جائے گا۔پروفیسر الفرید ظفر اور پروفیسر خالد محمود نے کہا کہ حکومت پنجاب کے ویڑن کے مطابق ہسپتال میں آنے والے مریضوں کو زیادہ سے زیادہ سہولیات کی فراہمی کے لئے تمام وسائل برؤئے کار لائے جا رہے ہیں اور سرکاری ہسپتال میں رات گئے تک ایم آر آئی ٹیسٹ کی سہولت سے شہریوں کو نجی کلینکس کا رخ نہیں کرنا پڑے گا۔انہوں نے کہا کہ حکومتی پالیسی کے مطابق غریب و نادارمریضوں سمیت یہ سہولت سرکاری ملازمین کو بھی بلا معاوضہ میسر ہوگی جس سے زیادہ سے زیادہ مریضوں کو فائدہ حاصل ہوگااور وہ کسی وقت بھی اپنا ایم آر آئی ٹیسٹ کروا سکیں گے جس سے بالخصوص دفاتر میں کام کرنے والے اپنے دفتری اوقات کے بعد ہسپتال آ سکیں گے

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -