ٹانک، اراضی ملکیتی تنازع، 2قبائل میں خونریز جھڑپ کاخدشہ 

  ٹانک، اراضی ملکیتی تنازع، 2قبائل میں خونریز جھڑپ کاخدشہ 

  

ٹانک(نمائندہ خصوصی)جنوبی وزیرستان زمین ملکیتی تنازعے پر وزیر اور محسود قبائل کے مابین خونریز جھڑپ کا خدشہ دونوں فریقین نے زمین دوزمورچوں میں پوزیشن سنبھال لی، تمام مصالحتی کوششیں ناکام، تفصیلات کے مطابق گزشتہ ایک عرصے سے جاری زمین ملکیتی تنازعے نے سنگین صورت اختیار کرلی آج بروز ہفتہ  جنوبی وزیرستان کے محسود قبائل اور شمالی وزیرستان کے وزیر قبائل کے مابین تمام مصالحتی جرگوں کی ناکامی کے بعد دونوں اقوام نے نژمیرے اور رزمک کے پہاڑوں پر زمین دوز مورچے بناکر اس میں بھاری اسلحہ نصب کردیا ہے، جس سے کسی بھی وقت حالات خراب ہوسکتے ہیں، درین آثناء محسود قبائل کے رہنما ملک سیف الرحمان محسود نے تحصیل مکین میں محسود قبائل کے گرینڈ جرگہ سے خطاب کے دوران کہا کہ گزشتہ آپریشنوں کے دوران محسود قبائل کا اپنے علاقوں سے نکل مکانی کے بعد وزیر قبائل نے ہماری قوم کی غیر موجودگی کا فائدہ آٹھا کر ہمارے زمینوں، گھروں اور باغات پر قبضہ کرکے غیر انسانی عمل کیا ہے، ان کا کہنا تھا کہ ابھی وزیر قبائل نے تمام مصالحتی مذاکرات کرنے سے انکار کردیا جس کے باعث محسود قبائل کے پاس کوئی راستہ نہیں رہا، ان کا کہنا تھا کہ جائداد کے حصول کیلئے محسود قبائل کسی قسم جانی و مالی قربانی سے دریغ نہیں کرینگے، اور اپنا حق ہر صورت میں حاصل کرینگے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -