وزیر اعلی سے ظہور احمد دھریجہ کی ملاقات‘ مختلف امور پر بات چیت 

وزیر اعلی سے ظہور احمد دھریجہ کی ملاقات‘ مختلف امور پر بات چیت 

  

ملتان (سٹی رپورٹر) وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے کہا کہ صوبے کا وعدہ پورا ہوگا، صوبہ کمیشن کی تجویز وزیراعظم کی خدمت میں پیش کریں گے وسیب کی محرومی کے خاتمے کیلئے وسیع تر اقدامات کئے جا رہے ہیں، تھل کے(بقیہ نمبر23صفحہ6پر)

 علاقہ چوبارہ میں بہت بڑا صنعتی زون بنایا جا رہا ہے۔ اسی طرح بہاولپور کو بھی انڈسٹریل زون دیا گیا ہے اور سالہا سال سے زیر التوا رحیم یارخان انڈسٹریل زون کو فنکشنل کر دیا گیا ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے گذشتہ روز سرائیکستان قومی کونسل کے چیئر مین ظہور احمد دھریجہ سے لاہور میں ایک ملاقات میں کیا اس موقع پر وزیر اعلی پنجاب نے کہاہے کہ بہاولپور کو سی پیک منصوبے سے لنک اپ کریں گے۔ جبکہ انڈس ہائی وے کو موٹر وے بنایا جا رہا ہے جس کا راجن پور، ڈی جی خان، تونسہ اور ڈی آئی خان کو بھی فائدہ ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ وسیب میں نئی یونیورسٹیاں بنیں گی، کورونا کی وجہ سے چند ماہ کی تاخیر ہوئی البتہ ترقیاتی پروگراموں میں تیزی لائیں گے، خانپور کیڈٹ کالج کی تعمیر جلد مکمل ہو گی، 9 ویں اور 10 جماعت میں سرائیکی پڑھانے کیلئے SST کی بھرتیاں کی جائیں گی اور کالجوں میں سرائیکی لیکچررز کی آسامیاں مزید بڑھائی جائیں گی۔ ظہور دھریجہ نے وسیب کے مسائل کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ سب سول سیکرٹریٹ صوبے کا متبادل نہیں، وسیب کو صوبہ بھی چاہئے اور شناخت کے ساتھ مکمل حدود بھی۔ انہوں نے کہا کہ ملتان ڈویژن کو جھنگ کا ہیڈ تریموں سیراب کرتا ہے، اسی طرح ڈی جی خان سمیت وسیب کے دیگر اضلاع کو میانوالی کے جناح بیراج سے پانی حاصل ہوتا ہے۔ پانی کے بغیر صوبے کا کوئی فائدہ نہیں۔ اس پر وزیراعلیٰ نے سوال کیاکہ وسیب کی شناخت اور حدود کا مسئلہ کیسے حل ہو سکتا ہے؟ جس پر ظہور دھریجہ نے کہا کہ پارلیمانی صوبہ کمیشن بننا چاہئے جو صوبے کے نام، حدود اور دیگر امور کے مسائل بارے اپنی تجاویز مرتب کرے۔ انہوں نے کہا کہ صوبے کا دارالحکومت ملتان کو نہ بنایا گیا تو وسیب بکھر جائے گا  ملتان وسیب کا مرکزی شہر ہونے کے ساتھ ساتھ وسیب کے عین درمیان میں ہے۔ ظہور دھریجہ نے اس موقع پر ریجنل اخبارات کے ساتھ ساتھ وسیب کے ادیبوں شاعروں اور ہیڈ راجکاں کے مسئلے پر بھی بات کی اور عالمی شہرت یافتہ حاجی غلام فرید کنیرہ کے سرکاری خرچ پر علاج اور مالی امداد اور عربی کفیل اور مصری منیجر کے مظالم سے تنگ آ کر خودکشی کرنے والے چوٹی زیریں کے نوجوان صدام حسین ملغانی کی بیوہ کی امداد اور ملازمت کا بھی مطالبہ کیا، جس پر وزیراعلیٰ نے متعلقہ حکام کو ہدایت کی کہ فوری طور پر ان مسائل کو حل کیا جائے۔ 

بات چیت

مزید :

ملتان صفحہ آخر -