تیسرا ٹیسٹ، انگلینڈ کیخلاف پاکستان کی اوپننگ ایک مرتبہ پھر فلاپ، چار کھلاڑی آوٹ ، میچ ہاتھ سے نکلنے لگا 

تیسرا ٹیسٹ، انگلینڈ کیخلاف پاکستان کی اوپننگ ایک مرتبہ پھر فلاپ، چار کھلاڑی ...
تیسرا ٹیسٹ، انگلینڈ کیخلاف پاکستان کی اوپننگ ایک مرتبہ پھر فلاپ، چار کھلاڑی آوٹ ، میچ ہاتھ سے نکلنے لگا 

  

ساوتھمپٹن (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان اور انگلینڈ کے درمیان تیسرے ٹیسٹ میچ کا تیسرے روز کا کھیل جاری ہے جس میں پاکستان نے چار وکٹوں کے نقصان پر 41 رنز بنالیے ہیں لیکن ابھی 542 رنز کا خسارہ باقی ہے ۔

تفصیلات کے مطابق ساوتھمپٹن میں جاری تیسرے ٹیسٹ میچ کی پہلی اننگز میں انگلینڈ نے پہلی اننگز 583 رنز 8 کھلاڑی آوٹ پر ڈکلیئر کی جس کے جواب میں پاکستانی ٹیم کے بلے باز ابتداءمیں ہی لڑکھڑا گئے ہیں۔ پہلے میچ میں سنچری بنانے والے شان مسعود دوسرے ٹیسٹ کے بعد اب تیسرے ٹیسٹ کی پہلی اننگز میں بھی ناکام رہے اور صرف 4 رنز بنا کر انگلینڈ کیلئے پہلی کامیابی ثابت ہوئے۔ عابد علی بھی جوہر دکھانے میں ناکام رہے اور صرف 1 سکور بنا کر چلتے بنے، مڈل آرڈر بلے باز بابراعظم بھی صرف 4 رنز کے مہمان ثابت ہوئے اور جیمز اینڈرسن کے ہاتھوں ایل بی ڈبلیو ہو گئے ، اسد شفیق صرف 5 رنز بنا کر اینڈرسن کی گیند پر کیچ آوٹ ہو گئے ۔ 

قبل ازیں انگلینڈ نے ٹاس جیت کر میچ کا آغاز کیا اور مسلسل دو دن تک بلے بازی کرتے ہوئے 8 وکٹوں کے نقصان پر 583 رنز بنانے کے بعد اننگ ڈکلیئر کر دی ۔ انگلینڈ کی جانب سے کرولی نے پاکستانی باولرز کا بھرکس نکال دیا اور 393 گیندوں پر 34 چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے 267 رنز کی اننگ کھیل کر اپنی ٹیم کو بڑی سپورٹ فراہم کی ۔

ان کے علاوہ جوز بٹلر نے بھی پکڑائی نہیں دی اور وہ بھی وکٹ پر کھڑے دھواں دار چوکے چھکے لگاتے رہے ، انہوں نے 152 رنز بناتے ہوئے ٹیم کو ایک بڑا ٹوٹل سیٹ کرنے میں مدد کی ان کے علاوہ ووکس 40 ، ڈوم بیس 27 ، سبلی 22 اور جوئے روٹ 29 رنز بنانے میں کامیاب ہوئے ۔

پاکستان کی جانب سے سب سے مہنگے ترین باولر یاسر شاہ ثابت ہوئے ، یاسر شاہ نے 39 اوورز میں 173 رنز دیتے ہوئے دو وکٹیں حاصل کیں جبکہ شاہین شاہ آفریدی نے بھی دو کھلاڑیوں کو آوٹ کیا ۔ ان کے علاوہ فواد عالم بھی دو کھلاڑیوں کو پولین پہنچانے میں کامیاب ہوئے ۔اسد شفیق اور نسیم شاہ نے ایک ایک وکٹ حاصل کی ۔

مزید :

کھیل -