صوبائی وزیر تعلیم  STR اور ریشنلائزیشن پالیسی پر نظرثانی کریں،پی ٹی یو

صوبائی وزیر تعلیم  STR اور ریشنلائزیشن پالیسی پر نظرثانی کریں،پی ٹی یو

  

لاہور(سٹی رپورٹر)پنجاب ٹیچرز یونین کے مرکزی صدر چوہدری سرفراز، سید سجاد اکبر کاظمی، رانا لیاقت، جام صادق، رانا انوار، عبدالقیوم راہی، نادیہ جمشید، امتیاز طاہر، چوہدری محمد علی، میاں ارشد، رانا خالد، مرزا طارق، طاہر اسلام، غفار اعوان، نذیر گجر ودیگر نے کہا ہے کہ سابقہ حکومت کے دور میں ریشنلائزیشن پالیسی زمینی حقائق کے برعکس بنائی گئی جس کے باعث نظام تعلیم بری طرح متاثر رہا اب بھی انہی پالیسیوں کی وجہ سے  نظام تعلیم جمود کا شکار ہے 80 ہزار اساتذہ اور 3 ہزار ہیڈز کی آسامیوں خالی ہیں سابقہ دور حکومت میں وزیر اعلی کے ڈائریکٹو پر منظور نظر اساتذہ کے تبادلے کئے جاتے تھے اور اب ایکسٹریم ہارڈ شپ کے نام پر تبادلے  کئے جا رہے ہیں جو میرٹ کا قتل ہے۔وزیر اعلی پنجاب  اور وزیر تعلیم پنجاب سابقہ حکومت کی ریشنلائزیشن وایس ٹی آر پالیسی اور ایکسٹریم ہارڈ شپ کے تحت تبادلہ جات پر نظر ثانی کریں۔

 اور اساتذہ تنظیمیوں کو اعتماد میں لیکر ریشنلائزیشن وایس ٹی آر پالیسی از سر نو مرتب کی جائے۔  ریشنلائزیشن مرکز کی سطح پر اورایس ٹی آر کیلئے طلباء تعداد 30 مقرر کی جائے۔ پرائمری سکول میں کم ازکم 5 اساتذہ 2 درجہ چہارم ملازمین تعینات کئے جائیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -