متاثرہ لڑکی نے شناخت پریڈ کے دوران 3ملزموں کو پہنچا ن لیا

  متاثرہ لڑکی نے شناخت پریڈ کے دوران 3ملزموں کو پہنچا ن لیا

  

 لاہور(کر ائم رپو رٹر)گریٹر اقبال پارک کیس میں اہم پیشرفت ہوئی ہے، متاثرہ لڑکی عائشہ اکرم نے شناخت پریڈ کے دوران3 ملزمان کو پہچان لیا۔تفصیلات کے مطابق متاثرہ لڑکی نے40 افرادکی شناخت پریڈمیں 3ملزمان کی شناخت کر لی ہے، شناخت ہونے والے3 ملزمان نے سب سے پہلے متاثرہ لڑکی پرحملہ کیا۔ خاتون ٹک ٹاکر کا کہنا ہے کہ شناخت ہونے والے تینوں ملزمان پورے واقعے میں شامل رہے۔ عائشہ نے دوران شناخت پریڈمیں 2 مزید ملزمان پر بھی شک کا اظہار کیا۔عائشہ نے 3ملزمان کی حتمی شناخت جبکہ 2کو مشکوک قرار دیا۔ گریٹر اقبال پارک واقعے کے ملزمان کی شناخت پریڈروزانہ کی بنیاد پر جاری ہے۔ کیس میں سی سی پی او لاہور غلام محمود ڈوگر اور سابق ڈی آئی جی آپریشنز ساجد کیانی نے انکوائری کمیٹی کو بیان ریکارڈ کرادیا۔ رپورٹ آج آئی جی پنجاب کو رپورٹ کو پیش کی جائے گی اور آئی جی پنجاب رپورٹ کو وزیراعلی پنجاب کے سامنے پیش کریں گے رپورٹ کی روشنی میں افسران کے خلاف محکمانہ کاروائی کرنے یا نہ کرنے کا فیصلہ ہوگا دوسری طرفانسپکٹر جنرل پولیس پنجاب اعام غنی نے کہا ہے کہ گریٹر اقبال پارک میں خاتون پر تشدد اور دست درازی میں ملوث ملزمان کی گرفتاریوں کیلئے پنجاب پولیس کی کاروائیاں جاری ہیں اور پولیس تفتیش کا دائرہ بڑھاتے ہوئے دیگر اضلاع میں بھی ملزمان کو ٹریس کیا جا رہا ہے۔اسی سلسلے میں گذشتہ رات فیصل آباد، قصور اورشیخوپورہ میں پولیس ٹیموں نے چھاپے مار کر مزید 26 ملزمان کو گرفتار کر لیا   پنجاب پولیس جیو فینسنگ، نادرا ریکارڈ، سی سی ٹی وی فوٹیجز سمیت دیگر ثبوتوں اور جدید ٹیکنالوجی کے ذریعے ملزمان کو ٹریس کرنے کے لیے شب و روز کام کر رہی ہے اور مختلف اضلاع سے ملزمان کی گرفتاریاں عمل میں لائی جا رہی ہیں۔ اس افسوس ناک  واقعہ کے حوالے سے پولیس اب تک 407 مشتبہ افراد کو شامل تفتیش کر چکی ہے جن میں سے 92 افراد کو گرفتار کیا گیا جبکہ باقی تمام افراد کو چھوڑ دیا گیا   ان گرفتار ملزمان میں سے 40 کو شناخت پریڈ کیلئے جیل بھجوایا جا چکا ہے جبکہ مزید 30 کو آج بھجوایا جائے گا۔ 

قواقعہ گریٹر پارک

مزید :

صفحہ اول -