زکریایونیورسٹی،سٹاف کالونی میں لاکھوں روپے کی چوری

   زکریایونیورسٹی،سٹاف کالونی میں لاکھوں روپے کی چوری

  

  ملتان (سٹی رپورٹر)بہاء الدین زکریا یونیورسٹی کی سٹاف کالونی میں آفیسرز کے گھر پر چوری کی بڑی واردات، چور گھر کے تالے توڑ کر لاکھوں روپے نقدی لے کر فرار(بقیہ نمبر48صفحہ6پر)

 ہوگئے، ذرائع کے مطابق یونیورسٹی میں رات کے وقت بیشتر سیکیورٹی گارڈ ڈیوٹی سے غائب رہتے ہیں، جبکہ یونیورسٹی میں لگی کروڑوں روپے کی لائٹس خراب ہیں جن کی دیکھ بھال نہیں کی جارہی، یونیورسٹی میں سیکیورٹی کی ناقص صورتحال کے باعث گزشتہ دنوں منشیات فروش نے طالبعلم کو دن دھاڑے چھریوں کے وار سے قتل کردیا تھا جبکہ قاتل یونیورسٹی کے طالب علم نہ ہونے کے باوجود ہاسٹل میں رہ کر کھلے عام منشیات استعمال کرتا تھا، تفصیل کے مطابق بہاء الدین زکریا یونیورسٹی میں رہائش پذیر سابق پراجیکٹ ڈائریکٹر کے گھر سے رات گئے چور لاکھوں روپے نقدی لے کر فرار ہوگئے چور گھر کے تالے توڑ کر داخل ہوئے، یونیورسٹی میں آئے روز سٹاف کالونی میں چوریاں معمول بنتی جارہی ہیں، جبکہ یونیورسٹی سیکیورٹی چور کو پکڑنے میں مکمل طور پر ناکام ہے، ذرائع کے مطابق یونیورسٹی میں رات کے وقت چالیس کے قریب سیکیورٹی اہلکاروں کی ڈیوٹی ہوتی ہے مگر آدھے سے زیادہ سیکیورٹی گارڈ ڈیوٹی سے غائب رہتے ہیں یاپھر مختلف شعبہ جات میں جاکر سو جاتے ہیں، جس کی وجہ سے آئے روز واردات بڑھ رہی ہیں، یونیورسٹی سیکیورٹی کے حالات یہ ہیں کہ دن دھاڑے منشیات فروش اویس جٹ چھری لے کر ہاسٹل میں گھومتا رہا مگر کسی نے اسکے خلاف کارروائی نہیں کی، اور سیکیورٹی اہلکاروں کی نااہلی کی وجہ سے کلیم اللہ نامی نوجوان جان کی بازی ہار گیا، کلیم اللہ کو آؤٹ سائیڈر منشیات فروش اویس نے بے دردی سے قتل کردیا، اس واقع کے بعد یونیورسٹی آفیسر کے گھر لاکھوں روپے کی چور ہوگئی مگر سیکیورٹی افسران خواب غفلت سے نہیں جاگ رہے۔

واردات

مزید :

ملتان صفحہ آخر -