ویٹر نے کھانا کھانے آئی خاتون کا فون نمبر لے لیا، پھر ایسی حرکت کردی کہ بیچاری کے پیروں تلے سے زمین ہی نکل گئی

ویٹر نے کھانا کھانے آئی خاتون کا فون نمبر لے لیا، پھر ایسی حرکت کردی کہ ...
ویٹر نے کھانا کھانے آئی خاتون کا فون نمبر لے لیا، پھر ایسی حرکت کردی کہ بیچاری کے پیروں تلے سے زمین ہی نکل گئی

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) خواتین کے ساتھ جنسی ہراسگی نام نہاد مہذب مغربی معاشروں کا بھی انتہائی گھمبیر مسئلہ ہے جہاں سے آئے روز جنسی ہراسگی کے انتہائی شرمناک واقعات سامنے آتے رہتے ہیں۔ اب اس امریکی خاتون ہی کو دیکھ لیں جس نے ہوٹل میں کھانا کھایا اور ویٹر نے کس طرح اس کا فون نمبر حاصل کرکے اس کا جینا حرام کر دیا۔ 

ڈیلی سٹار کے مطابق اس خاتون نے ویب سائٹ Redditپر یہ واقعہ سناتے ہوئے لکھا ہے کہ ”مجھے ان دنوں نوکری کی تلاش تھی۔ اس ہوٹل میں کھانا کھانے سے قبل میں نے منیجر سے اس حوالے سے بات کی اور پوچھا کہ آیا ان کے پاس کوئی جگہ خالی ہے جہاں وہ مجھے نوکری پر رکھ سکیں۔“

خاتون بتاتی ہے کہ ”وہاں ایک باتونی ویٹر تھا۔ اس نے میری منیجر کے ساتھ گفتگو سن لی اور میری میز پر آ کر میرے کان میں کھسرپھسر کرنے لگا۔ اس نے کہا کہ وہ میری اس حوالے سے مدد کر سکتا ہے اور جب بھی ہوٹل میں کوئی جگہ خالی ہوئی، مجھے بتا سکتا ہے۔ اس کے لیے اس نے مجھے اپنا فون نمبر دینے کی پیشکش کی۔ میں نے اپنا فون اسے دیا اور اس میں اس نے اپنا نمبر ڈائیل کر دیا۔ اس کے بعد اگلے ایک ہفتے تک اس شخص نے مجھ پر میسجز کی بھرمار کیے رکھی۔ پتا نہیں کس طرح اس نے میرے گھر کا پتہ بھی معلوم کر لیا۔ جب اس نے مجھے میرے گھر کے پتے کے بارے میں ایک میسج میں بتایا تو میرے پیروں تلے زمین نکل گئی اور میں نے پولیس کو رپورٹ کرنے کا فیصلہ کر لیا۔ میرے یہ واقعہ سنانے کا مقصد دیگر خواتین کو متنبہ کرنا ہے کہ وہ کسی بھی صورت کسی اجنبی کو اپنا فون نمبر مت دیں اور نہ ہی اپنے فون کی لوکیشن سروس آن رکھیں۔ ورنہ انہیں بھی اسی ذہنی کوفت سے گزرنا پڑ سکتا ہے۔“

مزید :

ڈیلی بائیٹس -