تین سالہ بچہ باپ کی تحویل سے برآمد کر کے ماں کے حوالے کر دیا گیا

تین سالہ بچہ باپ کی تحویل سے برآمد کر کے ماں کے حوالے کر دیا گیا

  

لاہور(نامہ نگار)ایڈیشنل سیشن جج نے حبس بے جا کی دائر درخواست پر کارروائی کرتے ہوئے 3سالہ بچہ باپ کی تحویل سے برآمد کرواکر درخواست گزار ماں کے حوالے کرنے کا حکم جاری کردیا ہے ۔عدالت میں درخواست گزار ثمینہ بی بی نے موقف اختیار کیا کہ اس کی شادی 15جون 2012ء کو محمد ظفر سے ہوئی تھی جس میں سے ان کا یک بیٹا محمد فیضان پیدا ہوا، 3ماہ قبل گھریلو ناچاقی پر اس کے شوہر نے اسے مارپیٹ کر گھر سے نکال دیا تھا۔

جس کے باعث وہ اپنے والد کے گھر میں رہائش پذیر ہے ۔اس کے شوہر نے زبردستی اس کے بچے کو چھین کر اپنی تحویل میں رکھا ہوا اور اس سے ملنے بھی نہیں دیا جارہا ہے ،عدالت سے استدعا ہے کہ بچے کو ماں کے حوالے کرنے کا حکم دیا جائے ،عدالتی حکم پر متعلقہ پولیس نے بچے کو عدالت کے روبرو پیش کردیا جہاں عدالت نے بچے کو ماں کے ساتھ بجھواتے ہوئے دائر حبس بے جا کی درخواست نمٹا دی ہے ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -