پی ٹی سی ایل کا صوبائی دارالحکومت سمیت پنجاب بھر کے صارفین کو کروڑوں کا ٹیکہ

پی ٹی سی ایل کا صوبائی دارالحکومت سمیت پنجاب بھر کے صارفین کو کروڑوں کا ٹیکہ

  

لاہور( ارشد محمود گھمن) پاکستان ٹیلی کیمونکیشن لمیٹڈ کمپنی کا صوبائی دارلحکومت سمیت پنجاب بھر کے صارفین کو کروڑوں کا ٹیکہ انٹرنیٹ براڈ بینک ‘ سمارٹ ٹی وی اور دیگر کالز کے نام پر سالانہ خسارہ پورا کرنے کیلئے اضافی بلز ڈال کر کروڑوں روپے اکھٹے کر لئے، پی ٹی سی ایل کی طرف سے صارفین کی راہنمائی کیلئے ہیلپ لائن کے دئیے گئے نمبرز پر موجود عملہ مرد و خواتین نے شکایات کرنے والے افراد کو معطمین کرنے کے لئے اضافی سرٹفکیٹ کی ڈگریاں حاصل کر رکھی ہیں یہاں تک کے شکایت کرنیو الے کسٹمرز کو بیس سے پچاس منٹ تک ہولڈ کرواکر بات کرنا تک گوارہ نہیں کیا جاتا بعد میں خود کال منقطع کی جاتی ہے ۔سینکڑوں صارفین نے الزام عائد کیا ہے کہ ہیلپ لائن پر موجود عملہ اپنے عزیز و اوقارب کے ساتھ دوران ڈیوٹی گفت و شنید میں مصروف پایا جاتا ہے ۔وفاقی محتسب نے موصول ہونے والی درخواستوں پر محکمہ کے خلاف کاروائی کا دائرہ وسیع کر لیا ۔تفصیلات کے مطابق پاکستاب ٹیلی کیمونکیشن کمپنی کئی عرصہ دراز سے صارفین ٹیلی فون کو بے جا کالز اور انٹرنیٹ براڈ بینک سمارٹ ٹی وی کو استعمال کرنے والوں کو ناجائز طور پر بلوں میں اضافی کالز وغیرہ ڈال دیتے ہیں جبکہ جو صارفین ماہانہ بلوں کی ادائیگی کے لئے متعلقہ بینکوں میں بل جمع کرواکر آ جاتے ہیں جو کہ بینک کی طرف سے محکمہ ٹیلی فون اکاؤنٹس برانچ کو یو بی سی ایس کسٹمر وائز ٹرانزیکشن رپورٹ بھجوا ئی جاتی ہے مگر وہاں پر نا اہل عملہ اس کو ریکارڈ میں لانے کی بجائے ردی کی ٹوکری کی نظر کر دیتے ہیں جبکہ محکمہ کی طرف سے کمپوٹر اکاؤنٹس پر موجود عملہ سفارشی بھٹا دیا گیا ہے جو کہ کمپوٹر کی الف ب سے بھی واقف نہیں ہے ان کی وجہ سے ہر ماہ ہزاروں صارفین کو دوبارہ بقایا جات بلز میں لگا کر بھجوادئیے جاتے ہیں اور صارفین ٹیلی فون کے کنکشن کی سروس کو بھی منقطع کیا جاتا ہے اپنی سروس کی بحالی کے لئے صارفین ٹیلی فون اپنے بل سے بقایا جات ختم کروانے کے لئے سمن آباد ‘ ایجرٹن روڈ ‘ فیصل ٹاؤن وغیرہ کے علاقوں میں زلیل و خوار ہوتے رہتے ہیں مگر اس کے باوجود بھی ان کی شنوائی نہیں ہوتی تو بقایا جات کے ساتھ اضافی بل کو دوبارہ بینک میں جمع کروانا پڑتا ہے محکمہ پی ٹی سی ایل کی طرف سے صارفین کی ہیلپ کے لئے بلنگ ہیلپ لائن 1200شکائت کے لئے 1218ڈائیریکٹری سروس 1217ایس ایم ایس شکائت 051-218-1218میں موجود عملہ بجائے راہنمائی کر نے کے عوام کے لئے درد سر بنا ہوا ہے ۔علاوہ ازیں ڈائریکٹری سروس 1217میں موجود عملہ سرکاری اداروں وغیرہ کے نمبرز فراہم کرنے کی بجائے غلط نمبرز بتا دیتا ہے محکمہ کی غفلت اور لا پرواہی کی وجہ سے ڈائریکٹری سروس سے بھی غلط نمبروں کے اندراج کی وجہ سے عوام کو کوئی فائدہ نہیں ہو رہا ہے۔

مزید :

صفحہ آخر -