سندھ اسمبلی : خاتون صحافی ام علیشا پر تشدد کے خلاف احتجاج

سندھ اسمبلی : خاتون صحافی ام علیشا پر تشدد کے خلاف احتجاج

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر) سندھ اسمبلی کے اجلاس کی کوریج کرنے والے صحافیوں نے منگل کو حیدرآباد کی خاتون صحافی ام علیشا پر تشدد کے خلاف احتجاج کیا اور نعرے بازی کرتے ہوئے پریس گیلری سے باہر آگئے ۔انہوں نے ’’صحافیوں پر تشددنا منظور ‘‘ ، ہم نہیں مانتے ظلم کے ضابطے ‘‘ اور دیگر نعرے لگائے ۔سندھ کے سینئر وزیر تعلیم نثار احمد کھوڑو ،وزیر داخلہ سہیل انور سیال اور وزیر خوراک سید ناصر حسین شاہ نے احتجاج کرنے والے صحافیوں سے ملاقات کی اور انہیں یقین دلایا کہ متاثرہ خاتون صحافی کو انصاف دلایا جائے گا ۔انہوں نے ایس ایس پی حیدر آباد عرفان بلوچ کو فون کرکے ہدایت کی کہ ام علیشا پر تشدد کا مقدمہ درج کرکے اس کی کاپی صحافیوں کو دی جائے ۔صوبائی وزراء کی یقین دہانی کے بعد صحافیوں نے احتجاج ختم کردیا ۔ام علیشا ایک سندھی چینل کی حیدرآباد میں رپورٹر ہیں ۔قبل ازیں سندھ اسمبلی کے اجلاس میں پیپلزپارٹی کی خاتون رکن خیر النساء مغل اور پاکستان مسلم لیگ (فنکشنل) کی خاتون رکن نصرت سحر عباسی نے ام علیشا پر تشدد کی مذمت کی ۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -