نئے بلدیاتی نظام کا نفاز، 31دسمبر کو فنڈز منجمد، فنانس پالیسی جاری

نئے بلدیاتی نظام کا نفاز، 31دسمبر کو فنڈز منجمد، فنانس پالیسی جاری

  

ملتان (خبر نگار) حکومت پنجاب شعبہ فنانس نے حالیہ بلدیاتی سیٹ اپ کی تبدیلی کے سلسلے میں پالیسی جاری کردی ہے۔ 31دسمبر2016ء کو تمام بلدیاتی اداروں کے فنڈز منجمند ہو جائیں گے۔ جبکہ تمام مالیاتی ریکارڈ مکمل طور پر تیار رکھنے اور سکسیر(successor) بلدیاتی ادارے کے حوالےکرنے کا حکم دیا ہے۔ صوبہ پنجاب میں نئے بلدیاتی سیٹ اپ کے سلسلے میں چیئر مین ضلع کونسل، میئر میونسپل کارپوریشن اور چیئرمین میونسپل کمیٹیوں کے انتخاب کا مرحلہ بھی مکمل ہو چکا ہے اور پنجاب حکومت نے یم جنوری 2017ء سے نئے بلدیاتی سسٹم کے نفاذ کا اصولی فیصلہ کرلیا ہے۔ جبکہ فنانس ڈیپارٹمنٹ پنجاب نے اس تبدیلی کے حوالے سے باقاعدہ پالیسی جاری کردیا ہ اور صوبہ بھر کے بلدیاتی اداروں کے فنڈز 31دسمبر 2016 کو منجمد کرنے کے احکامات جاری کردیئے ہیں۔ اور اس وقت تمام بلدیاتی اداروں کے سربراہان کو ہدایت جاری کردی گئی ہیں کہ وہ اپنا تمام مالیاتی ریکارڈ تیار رکھیں اور نئے وجود میں آنے والے بلدیاتی ادارے کے حوالے کیا جائے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -