خاتون قتل کیس:بیٹوں سمیت تاجی کھوکھرکیخلاف مقدمہ سے انسداد دہشتگردی کی دفعات ختم کرنے کا حکم

خاتون قتل کیس:بیٹوں سمیت تاجی کھوکھرکیخلاف مقدمہ سے انسداد دہشتگردی کی ...

لاہور(نامہ نگار خصوصی )سپریم کورٹ نے خاتون کے قتل کے الزام میں تاجی کھوکھر اور اس کے بیٹوں کے خلاف درج مقدمہ میں انسداد دہشت گردی کی دفعات ختم کرنے کا حکم دے دیا ہے۔چیف جسٹس پاکستان مسٹر جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں تین رکنی بنچ نے تاجی کھوکھر اور اس کے بیٹوں کی درخواست پر سماعت کی، جس میں قتل کے مقدمے میں انسداد دہشت گردی کے قانون کی دفعات کو شامل کرنے کے اقدام کو چیلنج کیا گیا، بنچ کو آگاہ کیا گیا کہ درخواست گزار ملزم کے خلاف صابرہ بی بی کے قتل کا مقدمہ درج کیا گیا اور غیر قانونی طور پر مقدمہ میں انسداد دہشت گردی کے قانون کی دفعات شامل کی گئیں ہیں جبکہ قتل کے مقدمہ میں انسداد دہشت گردی کی دفعات کا اطلاق نہیں ہوتا اس لئے مقدمہ سے انسداد دہشت گردی قانون کی دفعات کو خارج کیا جائے، چیف جسٹس پاکستان کی سربراہی میں تین رکنی بنچ نے تاجی کھوکھر کیس کی درخواست محفوظ کیا گیا فیصلہ سناتے ہوئے انسداد دہشت گردی کی دفعات ختم کرنے کا حکم دے دیاہے۔

تاجی کھوکھر

مزید : علاقائی