قائداعظم نے اسلامی اقدار ،قو می تشخص کوبنیا د بنا یا تھا ،ڈ اکٹر صدف

قائداعظم نے اسلامی اقدار ،قو می تشخص کوبنیا د بنا یا تھا ،ڈ اکٹر صدف

لاہو ر ( پ ر ) ادارہ قو می تشخص پا کستان کے صدرڈ اکٹر صدف علی نے کہا ہے کہ قائداعظم ؒ نے بر صغیر کے مسلمانوں میں آ زادی کا شعور اور جذبہ بیدا ر کر نے کیلئے اقبا ل کے فلسفہ خودی کے مطا بق اسلامی اقدار اور قو می تشخص کوبنیا د بنا یا تھا ۔ گزشتہ روز یو م پیدائش قا ئداعظم ؒ کے سلسلہ میں ایک بیان میں کہا ہے کہ قا ئداعظم ؒ نے دنیا کی سب سے بڑی اسلا می مملکت حاصل کرنے کے بعد اپنی طر ز زندگی تبدیل کر دی تھی اور مغربی لباس ہمیشہ ہمیشہ کیلئے تر ک کرکے یہ ثا بت کر دیا تھا کہ پا کستانی عوام کو ایک با غیرت اور زندہ قوم بنا نے کیلئے اہلِ مغرب کی تابعداری اور نقا لی کی بجائے اسلامی اقدار اور اسلامی روایات کو فر و غ دینا چا ہیے انہو ں نے کہا کہ قا ئداعظم ؒ اس حقیقت سے بخو بی آ گاہ تھے کہ جب تک صو رت غلا ما نہ رہیگی اس وقت تک ذہنیت بھی غلا ما نہ ہی رہیگی ۔جس کا اظہار انہوں نے اپنے خطبا ت اور عمل کے ذریعہ کر دیا تھا ۔

ڈ اکٹر صدف علی نے مزید کہا کہ بد قسمتی سے ہماری تمام حکو متوں نے فر مو دات قائد سے رو گرد انی اورنا فر ما نی کی جس کے با عث پا کستان ایٹمی قو ت بننے کے با و جود ذلیل و خوار ہو رہا ہے ۔ ہم ہمیشہ اپنے قو می اور اسلامی تشخص سے محرو م رہے قا ئداعظم ؒ کی تقلید کی بجائے اہلِ یو رپ کی نقا لی اور حا شیہ بر داری کی ۔حا لا نکہ دنیا میں وہی مما لک اور قو میں کا میاب اور سر خرو رہی ہیں جنہوں نے اپنے تشخص پر قا ئم رہتے ہو ئے تر قی کی منازل طے کی ہیں ۔انہوں نے کہا کہ نئی نسل کو انگلش میڈیم سکو لو ں کے ذر یعہ غلا مانہ ذہنیت کی تربیت دی جا رہی ہے اور انہیں یو ر پی تہذیب و تمدن زیا دہ اور اپنے مسلما نو ں کے کا ر ناموں سے دور کیا جا رہا ہے جس کے بہت خطر نا ک نتا ئج ہوں گے قو می زبا ن رائج کر نے میں غفلت کے سبب شر ح خواندگی میں کمی ہو تی جا رہی ہے ہر سطح پر ملک بھر میں یکساں نظا م تعلیم اور یکساں قو می لبا س رائج کیا جا ئے تا کہ علا مہ اقبا ل اور قا ئداعظمؒ کے پا کستان کی جا نب پیش قد می کی جا سکے ۔ انہوں نے حکومت سے اپیل کی ہے کہ سپریم کورٹ کے فیصلہ کی روشنی میں ملک بھر میں ہر سطح پر قومی زبا ن اردو کو رائج کیا جا ئے ۔ تمام اقوام عالم نے اپنی اپنی قومی زبان پر قائم رہتے ہو ئے ترقی کی ہے ۔

مزید : میٹروپولیٹن 4