پیپلز پارٹی ، مسلم لیگ ن کے درمیان خفیہ رابطے ہیں : تحریک انصاف

پیپلز پارٹی ، مسلم لیگ ن کے درمیان خفیہ رابطے ہیں : تحریک انصاف
پیپلز پارٹی ، مسلم لیگ ن کے درمیان خفیہ رابطے ہیں : تحریک انصاف

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لاہور(نمائندہ خصوصی) پنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف میاں محمودالرشید نے کہا کہ مسلم لیگ ن وزارت عظمیٰ کیلئے اب صرف نامزدگی ہی کر سکتی ہے، ختم نبوت قانون پر کاری ضرب لگا کر، عدلیہ پر وار کر کے، ریاستی اداروں کو گھر کی لونڈی بنا کر رکھنے والے اب اقتدار کو بھول جائیں، عوام ان جعلی حکمرانوں کے مکروہ عزائم سے آشنا ہو گئے۔احاطہ اسمبلی میں صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے انکا کہنا تھا کہ ایک منتخب وزیراعظم کا عدالت سے سند یافتہ تاحیات نا اہل شخص سے ڈکٹیشن لینا سمجھ سے بالاتر ہے، شاہد خاقان عباسی وزارت عظمیٰ کے منصب کو نوکری سمجھ بیٹھے ہیں یہ رویے ملکی اورجمہوریت دونوں کے مفاد میں ہی نہیں ہیں۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ شریف خاندان کے سرتاحال حدیبیہ پیپرز ملز کیس کی تلوار لٹک رہی ہے، ریاستی ادارے اپنا کام مکمل ایمانداری ے کرتے تھے عدالت سے کیس خارج نہ ہوتا۔ انکامزید کہنا تھا کہ کرپشن، کمیشن حکمرانوں کا خاصہ، ایسے میں ترقی خواب ہے جب عام آدمی تعلیم، صحت، صاف پانی جیسی بنیادی سہولتوں سے محروم ہو، بروقت انتخابات میں مسلم لیگ ن خود رکاوٹیں ڈال رہی ہے، پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ ن کے درمیان تاحال خفیہ رابطے ہیں، دونوں جماعتیں احتساب اور بروقت انتخابات سے خوفزدہ ہیں یہی انکو اب تک جوڑے ہوئے ہے۔

میاں محمودالرشید

مزید : صفحہ اول