جنرل اسمبلی میں ہزیمت اٹھانے کے بعد ٹرمپ انتظامیہ غلط فیصلہ فوری واپس لے :اردوان

جنرل اسمبلی میں ہزیمت اٹھانے کے بعد ٹرمپ انتظامیہ غلط فیصلہ فوری واپس لے ...

انقرہ (آئی این پی)ترک صدر رجب طیب اردوان نے کہاہے کہ اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں القدس مسودہ کی بھاری اکثریت سے منظوری ہمارے لیے باعث مسرت ہے9 ووٹوں کے مقابلے میں 128 ووٹوں کے ساتھ اس مسودے کی منظوری کا ہم ممنونیت کے ساتھ خیر مقدم کرتے ہیں۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق اردوان نے ٹویٹر کے ذریعے پیغام شیئر کرتے ہوئے لکھا ہے کہ ہم ٹرمپ انتظامیہ سے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں عالمی موقف کا واضح مظاہرہ ہونے اور ہزیمت اٹھانے کے بعد اس غلط فیصلے سے فوری طور پر پیچھے قدم ہٹانے کی توقع رکھتے ہیں۔ میں فلسطین اور القدس کے اس حق بجانب مطالبے کی حمایت کرنے والے ہر ایک کا ذاتی طور پر اور ترک قوم کے نام پر شکریہ ادا کرتا ہوں۔صدر نے اسی پیغام کو عربی اور انگریزی زبان میں بھی شیئر کیا ہے۔دوسری جانب صدارتی ترجمان ابراہیم قالن نے بھی ٹویٹر پیغام میں لکھا ہے کہ ٹرمپ انتظامیہ کے بیت المقدس فیصلے کو مسترد کرنے والے بل کو 128ووٹوں کے ساتھ قبول کر لیا گیا ہے۔ مسئلہ فلسطین کے نام پر عالمی انصاف و ضمیر کے نام پر اس تاریخی فیصلے کا ہم سب بخوشی خیر مقدم کرتے ہیں۔فلسطینی صدر محمود عباس نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کی قراردادکو ایک اہم فتح قرار دیدتے ہوئے کہا ہے کہ یہ فلسطین کی ایک فتح ہے۔اسرائیلی وزیراعظم بن یامین نیتین یاہو نے لقدس کے امریکی فیصلے کی مخالفت کو مسترد کرتیہوئے صدر ٹرمپ کا شکریہ ادا کیا ہے۔

اردوان

مزید : کراچی صفحہ اول

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...