نوشہرہ ،بلدیاتی انتخابات میں پی ٹی آئی کو بری شکست کا سامنا

نوشہرہ ،بلدیاتی انتخابات میں پی ٹی آئی کو بری شکست کا سامنا

نوشہرہ(بیورورپورٹ)اے این پی ضلع نوشہرہ کے صدر ملک جمعہ خان نے کہا ہے کہ بلدیات کے ضمنی انتخابات میں عوام نے اے این پی پر بھرپور اعتماد کااظہار کرتے ہوئے ضلع نوشہرہ سے تمام امیدوار بھاری اکثریت سے کامیاب کرائیں اور ضلع نوشہرہ سے تحریک انصاف کو بری شکست دے کر یہ ثابت کردیا ہے کہ تحریک انصاف نے عوام سے جو وعدے کئے تھے وہ جھوٹے تھے اس لئے عوام نے اسے مسترد کردیا ہے یہ ایک ٹریلر تھا فلم ابھی باقی ہے بھاری فنڈ دینے کے باوجود تحریک انصاف کے امیدواروں کا شکست تحریک انصاف کی حکومت کے منہ پر ایک تمانچہ ہے جمعے کے روز ضلع کونسل کااجلاس نائب ناظم پر دباؤ کا نتیجہ ہے تاکہ حکومت کے منظور نظر ممبران کونوازا جاسکے افسوس کی بات ہے کہ جمعے کی آذان ہورہی تھی اور اجلاس بھی جاری تھا ان خیالات کااظہارانہوں نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ اے این پی صوبہ خیبرپختونخوا کی سب سے بڑی پارٹی ہے اے این پی میں کوئی اختلاف نہیں ہمیں اپنے لیڈروں پر پورا اعتماد ہے اور یہ بات بلدیاتی ضمنی انتخابات میں ثابت ہوچکی ہے کہ اے این پی کے کارکن متحد ہیں انہوں نے کہا کہ 7 مختلف یونین کونسلوں جن میں ڈاگ بیسود، خدریزی، اکبرپورہ، ترخہ، نوشہرہ سٹی، اکوڑہ خٹک اور جبئی میں اے این پی کے امیدواربھاری اکثریت سے کامیاب ہوچکے ہیں انہوں نے کہا کہ ڈاگ بیسود میں اے این پی کے امیدوار کی کامیابی ضلع کونسلر اسلام نبی کا عبرتناک شکست ہے کیونکہ وہ ضلعی ناظم کی خوشامدی کی وجہ سے بھاری فنڈ حاصل کرنے کے باوجود علاقے کے عوام کی خدمت کرنے میں ناکام ہوچکا ہے اس لئے عوام نے اس پر عدم اعتماد کااظہار کردیا ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر