دارالحکومت مظفرآباد شہر کے ہوٹل پیسوں کے عوض موت بانٹنے لگے

دارالحکومت مظفرآباد شہر کے ہوٹل پیسوں کے عوض موت بانٹنے لگے

مظفرآباد(بیورورپورٹ)دارالحکومت مظفرآباد شہر کے ہوٹل پیسوں کے عوض موت بانٹنے لگے ۔باسی مضر صحت کھانے اور چائے مہنگے داموں فروخت کر رہے ہیں ۔ضلعی انتظامیہ خاموش تماشائی کا کردار ادا کرنے لگی ۔تفصیلات کے مطابق مظفرآباد شہر میں قائم ہوٹل مالکان پیسوں کے عوض شہریوں میں بیماریاں بانٹ رہے ہیں ہوٹلوں میں صحت و صفائی کے کوئی انتظامات نہیں گندے برتنوں میں عوام کو کھانے اور چائے فراہم کی جا رہی ہے جس کی وجہ سے لوگ کئی بیماریوں میں مبتلا ہو رہے ہیں شکایت کے باوجود انتظامیہ کے آفیسران اس جانب توجہ نہیں دے رہے جس کی وجہ سے ہوٹل مالکان کو کھلی چھٹی مل گئی ہے ۔معلوم ہوا ہے کہ کئی ہوٹل مالکان چائے اور کھانے پرائس کنٹرول کمیٹی کی طرف سے جاری کردہ نرخوں مطابق فروخت نہیں کر رہے جس کی وجہ سے شہریوں کو ہوٹل مالکان دونوں ہاتھوں سے لوٹ رہے ہیں مگر کوئی ذمہ دار نوٹس نہیں لیتا ۔ہوٹل مالک بے لگام ہو چکے ہیں اور عوام کو پیسوں کے عوض بیماریاں بانٹ رہے ہیں ۔عوامی حلقوں نے اس سنگین صورتحال پر سخت نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے ۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...