’وقت ختم ہو گیا، اب پاکستان کو۔۔۔‘ امریکی نائب صدر کی اچانک افغانستان آمد، اور آتے ساتھ ہی پاکستان کو تاریخ کی سب سے خوفناک دھمکی دے دی

’وقت ختم ہو گیا، اب پاکستان کو۔۔۔‘ امریکی نائب صدر کی اچانک افغانستان آمد، ...
’وقت ختم ہو گیا، اب پاکستان کو۔۔۔‘ امریکی نائب صدر کی اچانک افغانستان آمد، اور آتے ساتھ ہی پاکستان کو تاریخ کی سب سے خوفناک دھمکی دے دی

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

کابل(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکی صدر ڈونلڈٹرمپ کے اقتدار میں آنے کے بعد سے ہی امریکی انتظامیہ کا پاکستان کے ساتھ رویہ دھمکی آمیز ہو چکا ہے لیکن گزشتہ روز امریکہ کے نائب صدر مائیک پینس نے افغانستان کے اچانک دورے کے دوران پاکستان کو تاریخ کی خوفناک ترین دھمکی دے دی ہے۔ ڈان ڈاٹ کام کی رپورٹ کے مطابق مائیک پینس نے افغانستان کی بگرام ایئربیس پر 15ہزار امریکی فوجیوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ”افغان جنگ کے آغاز سے ہی پاکستان طالبان اور دیگر شدت پسند گروہوں کو اپنی سرزمین پر محفوظ ٹھکانے دیتا آ رہا تھا، لیکن اب وہ وقت ختم ہو گیا ہے اور صدر ڈونلڈٹرمپ نے پاکستان کو اس حوالے سے خبردار کر رکھا ہے۔اب امریکہ افغانستان میں سرحد پار سے ہونے والے حملوں کو روکنے کے لیے ہر ممکن اقدام کرے گا۔“

مائیک پینس کا مزید کہنا تھا کہ ”ڈونلڈٹرمپ پاکستان کوبتا چکے ہیں کہ اگر وہ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں امریکہ کا ساتھ دے گا تو اسے بہت کچھ حاصل ہوگا لیکن اگر وہ شدت پسندوں کو ٹھکانے دینا جاری رکھے گا تو یاد رکھے کہ اس کے پاس کھونے کو بہت کچھ ہے۔“

واضح رہے کہ رواں ماہ کے آغاز میں امریکی وزیرخارجہ ریکس ٹیلرسن بھی پاکستان کو دھمکی دے چکے ہیں کہ ”اگر پاکستان نے حقانی نیٹ ورک اور دیگر شدت پسند کے ساتھ تعلقات منقطع نہ کیے اور ان کے خلاف کارروائی نہ کی تو وہ اپنی سرزمین کا کنٹرول کھو سکتا ہے۔“

پاکستان کی طرف سے ان امریکی الزامات کی سختی سے تردید کی گئی ہے۔ پاکستانی حکام کا اس حوالے سے موقف ہے کہ ”پاکستان اپنی سرزمین پر دہشت گردوں کے خلاف بلاامتیاز کارروائی کر رہا ہے اور وہ حقانی نیٹ ورک کے لیے بھی کوئی نرم گوشہ نہیں رکھتا۔“ پاکستانی حکام نے ایک بار پھر اس عزم کا اعادہ کیا ہے کہ وہ تمام دہشت گرد گروپوں کے خلاف بلاامتیاز کارروائی جاری رکھے گا۔

مزید : بین الاقوامی