اپنے دماغ کی سرجری کے دوران گٹار بجانے والا آرٹسٹ، ویڈیو نے دھوم مچادی

اپنے دماغ کی سرجری کے دوران گٹار بجانے والا آرٹسٹ، ویڈیو نے دھوم مچادی
اپنے دماغ کی سرجری کے دوران گٹار بجانے والا آرٹسٹ، ویڈیو نے دھوم مچادی

  

جوہانسبرگ (ڈیلی پاکستان آن لائن) جنوبی افریقہ سے تعلق رکھنے والے جاز آرٹسٹ موسیٰ منزینی نے دنیا بھر میں اپنی موسیقی کے ذریعے لوگوں کو تفریح فراہم کی ہے لیکن ان کی وہ پرفارمنس سب سے شاندار قرار دی جارہی ہے جو انہوں نے اپنے ہی دماغ کی سرجری کے دوران پیش کی۔

موسیٰ کے دماغ سے ٹیومر ہٹانے کے لیے ڈاکٹرز کی ٹیم نے ان کا 6 گھنٹے طویل آپریشن کیا جس کے دوران وہ خود گٹار بجاتے رہے۔47 سالہ یونیورسٹی پروفیسر اور جاز آرٹسٹ موسیٰ منزینی کے دماغ کی سرجری کی ویڈیو دنیا بھر میں تیزی سے مقبول ہورہی ہے۔

سرجری کے دوران موسیٰ کو گٹار بجانے کا مشورہ ڈاکٹرز نے ہی دیا تھا کیونکہ ان کے دماغ میں موجود ٹیومر کی وجہ سے ان کی کچھ انگلیاں اور دماغ متاثر ہوا تھا۔ آپریشن کے دوران گٹار بجانے کے باعث ڈاکٹرز کو یہ پتا لگانے میں مدد ملی کہ ان کے دماغ کے کس حصے سے موسیقی نکلتی ہے اور کون سا حصہ انگلیوں کو کنٹرول کر رہا ہے۔

اپنے آپریشن کے بارے میں بات کرتے ہوئے موسیٰ منزینی نے بتایا کہ ان کا یہ تجربہ بہت ہی ناخوشگوار اور تکلیف دہ تھا کیونکہ وہ نیم بیہوشی کی حالت میں تھے اور اپنے دماغ میں ٹارچ لائٹ اور دیگر چیزوں کی آوازیں سن سکتے تھے۔ موسیٰ منزینی نے اس عزم کا اظہار کیا کہ جیسے ہی ان کی حالت بہتر ہوگی وہ سٹیج پر پرفارم کرتے ہوئے نظر آئیں گے۔

۔۔۔ ویڈیو دیکھیں ۔۔۔

مزید : ڈیلی بائیٹس