فیس بک کے 26کروڑ صارفین کا ڈیٹا ڈارک ویب پر برائے فروخت

فیس بک کے 26کروڑ صارفین کا ڈیٹا ڈارک ویب پر برائے فروخت

  



لندن (آئی این پی) ہیکرز نے فیس بک کے 26 کروڑ 50 لاکھ صارفین کا ڈیٹا چوری کرکے ڈارک ویب پر فروخت کیلئے پیش کردیا ہے۔ جس میں تصاویر، آئی ڈی، ای میل اور فون نمبر شامل ہیں۔سائبر سیکورٹی اور ٹیکنالوجی سے متعلق ویب سائٹ کمپیئری ٹیک کی رپورٹ کے مطابق ہیکروز نے کروڑوں اکا ونٹس کی ساری معلومات ایک ہیکرز فورم پر ڈال دی ہیں اور ان کا تعلق عادی جرائم پیشہ گروہوں سے ہے۔رپورٹ کے مطابق تشویش ناک بات یہ ہے کہ اس ہیک شدہ ڈیٹا تک بغیر کسی پاسورڈ اور پابندی کے نہ صرف پہنچا جاسکتا ہے کہ یہ ساری معلومات ہیکرز فورم سے ڈان لوڈ بھی کی جاسکتی ہیں۔ اس ڈیٹا بیس میں زیادہ تر امریکی شامل ہیں۔فیس بک کے ترجمان نے کہا ہے کہ ہم اس مسئلے کو حل کرنے کی کوشش کررہے ہیں لیکن غالبا یہ معلومات فیس بک کی احتیاطی تدابیر سے قبل چوری کی گئی ہیں کیونکہ کئی برس قبل فیس بک نے صارفین کے ڈیٹا کی حفاظت کے لیے اہم اقدامات اٹھائے تھے۔رپورٹ کے مطابق فیس بک کا چوری شدہ ڈیٹا بیس اب بھی موجود ہے اور اس تک رسائی حاصل کرسکتا ہے جس میں کروڑوں افراد کی فیس بک تفصیلات موجود ہیں۔واضح رہے کہ اس سے قبل فیس بک نے خود اعتراف کیا تھا کہ 87 ملین افراد کے ڈیٹا کا کچھ حصہ چوری ہوا ہے جس میں اکثریت امریکیوں کی ہے۔ روں سال سال کے آغاز میں فیس بک اسی جرم کے پاداش میں 5 ارب ڈالر جرمانہ بھی ادا کرچکا ہے۔

مزید : علاقائی