ہیجان کی کیفیت میں کبھی بھی کاروبار ترقی نہیں کر سکتا‘ راؤ خورشید علی خان 

ہیجان کی کیفیت میں کبھی بھی کاروبار ترقی نہیں کر سکتا‘ راؤ خورشید علی خان 

  



لاہور(این این آئی)ملک میں ہیجان کی کیفیت میں کبھی بھی کاروبار ترقی نہیں کر سکتا،نظام میں موجود سقم دور کرنے کی بجائے ہر طبقے کوخوف و ہراس کا شکار کیا گیا جس کے معیشت پر منفی اثرات مرتب ہوئے،سخت پالیسیو ں کی وجہ سے معیشت کو دستاویزی کرنے کامطلوبہ ہدف بھی حاصل نہیں ہو سکا۔ ان خیالات کا اظہار لا ہور چیمبر کی سٹینڈنگ کمیٹی برائے کیمیکل امپورٹر زاینڈ ایکسپورٹر زکے چیئرمین را ؤخورشید علی خان نے تاجر تنظیموں کے زیر اہتمام ”ایزا آف ڈوئنگ بزنس“ کے موضوع پر مذاکراے سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔  اس مو قع پر لاہور چیمبر کی فنا نس اینڈ ٹیکسیشن کمیٹی کے چیئر مین کا شف انور،شا ہد ڈوگر سمیت دیگر نے بھی خطاب کیا۔انہوں نے کہا  کہ موجودہ حکومت کی کارکردگی صرف نعروں تک محدود ہے،نظام میں موجود سقم دور کرنے کی بجائے مختلف شعبوں میں کاروبار کرنے والے تا جروں کو ہراساں کر نے سے تجارتی سر گرمیاں مانند پڑ گئیں۔ماضی میں بھی اسی طرح کے تجربات کئے گئے جس کا معیشت کو فائدہ ہونے کی بجائے نقصان ہوا،2016میں پراپر ٹی سیکٹر کا بیڑہ غرق کر نے کیلئے ٹیکسز لگائے گئے،پھر بینکنگ سیکٹرکو اندھیروں کی نذر کرنے کیلئے 0.6ود ہو لڈ نگ ٹیکس کا آغاز کیا گیا جس کا نتیجہ سب کے سامنے ہے۔ انہوں نے کہا کہ پہلے ہی ٹیکسز کی بیجا شرائط نے کاروبارزندگی اجیرن بنا دی اوررہی سہی کسرہیجان کی کیفیت نے پوری کر دی ہے۔ حکومت معیشت کے پہیے کو چلا نا چا ہتی ہے تو تجارتی سرگرمیوں کی راہ میں حائل رکاوٹیں دور کرے اور کا روبا ر کر نے کیلئے آ سا نیاں پیدا کر ے۔ 

مزید : کامرس