آج سے عدالتوں کی تالا بندی ،ریلیاں ،حتجاجی دھرنے،وکلاءکا نیا منصوبہ ،صوبہ بھر میں جوڈیشل سسٹم جام

آج سے عدالتوں کی تالا بندی ،ریلیاں ،حتجاجی دھرنے،وکلاءکا نیا منصوبہ ،صوبہ ...

  



ملتان،مظفرگڑھ (وقائع نگار،نامہ نگار)پنجاب بار کونسل کی جانب سے لاہور میں وکلاءاور ڈاکٹرز کے درمیان تنازعہ اور وکلاءکی گرفتاریوں کے خلاف صوبہ بھر میں وکلاءکے احتجاج کا سلسلہ بدستور جاری ہے اس حوالے سے پنجاب بار نے (بقیہ نمبر23صفحہ12پر )

ایک ہنگامی اجلاس منعقد کیا جسمیں اس امر پر مایوسی اور دکھ کا اظہار کیا گیا کہ بے گناہ تمام گرفتار وکلاءکو رہا کیا گیا نہ ہی مقدمات سے دہشت گردی کی دفعات کو ختم کیا گیا۔ بلکہ حکومت نے انتہائی سردمہری کا مظاہرہ کیا اور اجلاس میں طے پایا گیا کہ آج (سوموار)کو پنجاب بھر کی عدالتوں کو مکمل تالہ بندی کی جائے گی. مقامی عہدیداران بار ایسوسی ایشنز کی قیادت میں وکلاءاحتجاجی ریلیاں نکالیں گے اور ایک گھنٹہ کیلئے ہر بار ایسوسی ایشن احتجاجی دھرنا بھی دے گی اس حوالے سے ملتان بار پنجاب بار کی ہدایت پر عملدرآمد کرے گی۔مظفرگڑھ سے نامہ نگارکے مطابق پنجاب بار کونسل آج سے پنجاب بھر میں عدالتوں کے لاک ڈاو¿ن اور احتجاجی دھرنوں کا اعلان کردیا ہے ۔ مظفرگڑھ سمیت جنوبی پنجاب کی تمام ضلعی اور تحصیل بارز گرفتار وکلاء کی رہائی, دہشت گردی کی دفعات حذف نہ کرنے اور ڈاکٹرز کی عدم گرفتاری کے خلاف آج فل ڈے ہڑتال اور مکمل عدالتی بائی کاٹ کریں گی جبکہ پنجاب بار کونسل کے فیصلے کے مطابق عدالتوں کی تالابندی کی جائے گی. بار روم سے احتجاجی ریلی نکالی جائے گی اور دھرنا دیا جائے گا. پنجاب کے وکلاء اور بار ایسوسی ایشنز نے پولیس پر پہلے ہی کچہریوں میں داخلے پر پابندی لگا رکھی ہے. جس کی وجہ سے نہ تو ملزمان کو عدالتوں میں پیش کیا جا سکا ہے اور نہ ہی مقدمات کی سماعت ہو پا رہی ہے. جس سے سائلین کو شدید مشکلات کا سامنا ہے. صوبہ کا جوڈیشل سسٹم جام ہو کر رہ گیا ہے. جبکہ پنجاب بار کونسل نے وکلاء کی رہائی تک لاک ڈاو¿ن جاری رکھنے کا اعلان کیا ہے جس پر آج عمل درآمد شروع ہوجائیگا۔

وکلا احتجاج 

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...