بلدیاتی ایکٹ کیخلاف اساتذہ کفن پوش احتجاج کیلئے تیار ‘پنجاب ٹیچرزیونین 

بلدیاتی ایکٹ کیخلاف اساتذہ کفن پوش احتجاج کیلئے تیار ‘پنجاب ٹیچرزیونین 

  



ملتان (سٹاف رپورٹر ) نئے بلدیاتی ایکٹ کے تحت سرکاری تعلیمی اداروں کی غلامی کو کسی صورت برداشت نہیں کریں گے‘ تعلیمی اداروں کو ان پڑھ بلدیاتی نمائندوں کے حوالے کرنے کی کوشش کی گئی تو اساتذہ سروں پر کفن باندھ کر احتجاج کریں گے کیونکہ تعلیمی اداروں میں سیاسی مداخلت نظام تعلیم کے خلاف تباہ کن ثابت ہو گی نت نئے تجربات سے نظام تعلیم کو تباہ نہ کیا جائے اور یکساں نظام تعلیم ہی رائج کیاجائے۔ ان خیالات کا اظہار پنجاب ٹیچرز یونین کے سینئر نائب صدر پنجاب رانا الطاف حسین،(بقیہ نمبر49صفحہ12پر )

 عبد الطارق نیازی ، رانا محمد فاروق نے پریس کانفرنس کے دوران کیا۔ رانا الطاف حسین نے مزید کہا کہ کسی بھی جمہوری ملک میں تعلیم اور صحت کی فراہمی ریاست کی بنیادی ذمہ داری ہے لیکن جب حکومت اپنے بنیادی فرائض سے غفلت برتے گی تو اس کے خطرناک نتائج برآمد ہوں گے۔ انہوں نے کہا کہ موسم سرما کی تعطیلات 6جنوری کو ختم ہونے کے بعد بلدیاتی ایکٹ کے خلاف نہ صرف اساتذہ کو آگاہ کیا جائے بلکہ 21جنوری کو پنجاب اسمبلی کے سامنے ملتان سمیت جنوبی پنجاب کے اساتذہ دھرنا بھی دیں گے‘ اگر موجودہ حکومت نے بلدیاتی ایکٹ کے تحت تعلیمی اداروں کی حوالگی کا فیصلہ واپس نہ لیا تو پی ٹی یو راست اقدام پر مجبور ہو جائے گی ۔

تیار 

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...