اعلیٰ تعلیم یافتہ نوجوان ملک و قوم کا روشن مستقبل ہیں:گورنر سندھ

اعلیٰ تعلیم یافتہ نوجوان ملک و قوم کا روشن مستقبل ہیں:گورنر سندھ

  



کراچی (اسٹاف رپورٹر) گورنرسندھ / چانسلر عمران اسماعیل نے کہا ہے کہ اعلیٰ تعلیم یافتہ نوجوان ملک وقوم کا روشن مستقبل ہیں۔ مستحکم، مضبوط، پائیداراور روشن پاکستان کے لئے نوجوانوں کو آگے آنا ہوگا۔ ہر شعبہ ہائے زندگی میں اعلیٰ تعلیم یافتہ نوجوانوں کی شمولیت انتہائی نا گزیر ہے۔ سندھ جناح میڈیکل یونیورسٹی کے فارغ التحصیل طلبہ و طالبات نے آج اپنی زندگی کا اہم سنگ میل عبور کرلیا ہے۔ اب آپ کو عملی زندگی میں ملک و قوم کی بھرپور خدمت کو اپنا مشن بنانا ہوگا۔مجھے خوشی ہے کہ آج گریجوئٹس میں 80فیصد خواتین ہیں والدین سے گذازش ہے کہ وہ اپنی لڑکیوں کو کام کرنے کی اجازت دیں اور ان کی محنت کو ضایع مت ہونے دیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے سندھ جناح میڈیکل یونیورسٹی کے تیسرے کانووکیشن کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر معروف صنعت کار سردار یٰسین ملک، وائس چانسلر طارق رفیع، مختلف فیکلٹیز کے ڈینز، لیکچرار، طلبہ و طالبات اور ان کے والدین کی بڑی تعدا د موجود تھی۔ چانسلر عمران اسماعیل نے نوجوانوں کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ ہمیشہ بڑا خواب دیکھیں جس طرح قائد اعظم ؒ نے بڑا خواب دیکھا تھا۔ امید کا دامن تھامے رکھیں اور ملک و قوم کے لئے کچھ کرنے کا عزم کریں یقین کریں آپ ضرور کامیاب ہو کر رہیں گے۔ ہمارے نوجوانوں کو کبھی بھی ہمت نہیں ہارنی چاہئے جو شخص ہمت ہارتا ہے وہ بہت پیچھے چلا جاتا ہے۔نوجوانوں کو ناکامیوں سے نہیں ڈرنا چاہئے کیونکہ ناکامی اللہ کی طرف سے ایک سبق ہوا کرتی ہے اس سے سیکھنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ یہ ہماری بد قسمتی ہے کہ ہمارا نوجوان اعلیٰ تعلیم حاصل کرکے اپنی خدمات بیرون ممالک میں ادا کررہے ہیں جس سے حکومتی اقدامات کے ثمرات عوام تک نہیں پہنچ پاتے ہیں کیونکہ ان نوجوانوں پر وسائل حکومت خرچ کرتی ہے جب ان سے استفادہ حاصل کرنے کا وقت آتا ہے تو معلوم ہوتا ہے کہ نوجوان کی بڑی تعداد بیرون ملک چلی گئی ہے۔ نوجوانوں کو اپنے ملک وقوم پر توجہ دینا چاہئے اپنے روشن مستقبل کے لئے بیرون ملک جانا کوئی بری بات نہیں لیکن نوجوانوں کو اپنے ملک و قوم کی جانب بھی توجہ دینی چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ تعلیم کے میدان میں طالبات بہت آگے ہیں۔ہر برس نمایاں پوزیشن حاصل کرنے میں طالبات سرفہرست رہی ہیں جو کہ خوش آئند بات ہے لیکن ہمارے طالب علموں کو بھی اپنی تعلیم پر بھرپور توجہ دے کر نمایاں پوزیشن حاصل کرنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ اعلیٰ تعلیم کا فروغ موجودہ حکومت کے منشور میں سرفہرست ہے اس ضمن میں پورے ملک میں یکساں تعلیمی معیار، عصرحاضر کے تقاضوں سے ہم آہنگ نصاب،جدید تحقیق اور مقابلے کے رجحان کے فروغ کے ساتھ ساتھ نوجوانوں کو مواقع فراہم کرنا حکومت کی اولین ترجیح ہے اس ضمن میں حکومت ہر ممکن تعاون و مدد فراہم کرے گی تاکہ جامعات سے فارغ التحصیل طالب علم مزید ملک و قوم کا نام روشن کرسکیں۔ جناح پوسٹ گریجویٹ میڈیکل سینٹر، NICVD اورNICH کے بارے میں گورنرسندھ نے کہا کہ یہ ہسپتال وفاق کو جائیں گے تو اس کا زیادہ سے زیادہ فائدہ عوام کو ہی ہو گا اور ان اسپتالوں میں بجٹ کابھی کوئی مسئلہ نہیں ہوگا۔انہوں نے مزید کہاکہ نوجوان وکیل اور ڈاکٹرز ہمارے بچے ہیں۔دنیا میں وکالت اور ڈاکٹر قابل احترام پیشے ہیں۔ لوگوں کو انصاف فراہم کرنے اور ان کی زندگیاں بچانے سے بڑی کوئی چیز نہیں۔ انہوں نے کہا کہ نوجوانوں کو بھرپور صلاحیت بروئے کار لانے کے لئے وفاقی حکومت نے نوجوان روز گار پروگرام شروع کیا جس کے تحت آسان اقساط پر قرضے دیئے جائیں گے تاکہ نوجوان اپنا کاروبار شروع کرسکیں اسی طرح ڈاکٹرز اپنا کلینک شروع کرسکتے ہیں۔بعد ازاں گورنرسندھ / چانسلر عمران اسماعیل نے کامیاب طلبہ و طالبات کو ڈگریاں دیں۔ گورنرسندھ نے سماجی خدمات کے صلہ میں معروف صنعت کار سردار یٰسین ملک کو ڈاکٹریٹ کی اعزازی ڈگری بھی دی۔

مزید : صفحہ اول /پشاورصفحہ آخر