امریکی ائیرپورٹ پر چینی سائنسدان گرفتار، اس کی جرابوں سے کیا نکلا؟ دیکھ کر سکیورٹی اہلکاروں کے بھی رونگٹے کھڑے ہوگئے

امریکی ائیرپورٹ پر چینی سائنسدان گرفتار، اس کی جرابوں سے کیا نکلا؟ دیکھ کر ...
امریکی ائیرپورٹ پر چینی سائنسدان گرفتار، اس کی جرابوں سے کیا نکلا؟ دیکھ کر سکیورٹی اہلکاروں کے بھی رونگٹے کھڑے ہوگئے

  



نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکہ میں ایئرپورٹ پر ایک چینی سائنسدان کو گرفتار کر لیا گیا ہے جس نے اپنی جرابوں میں ایسی چیز چھپا رکھی تھی کہ دیکھ کر سکیورٹی اہلکاروں کے بھی رونگٹے کھڑے ہو گئے۔ ساﺅتھ چائنہ مارننگ پوسٹ کے مطابق اس سائنسدان کو بوسٹن ایئرپورٹ پر گرفتار کیا گیا۔ اس نے اپنی جرابوں میں بائیولوجیکل سیمپل چھپا رکھے تھے۔ یہ نمونے شیشے کی بوتلوں میں ایک محلول میں ڈالے ہوئے تھے۔

اس 29سالہ سائنسدان کا نام ژینگ ژاﺅ سانگ بتایا گیا ہے جو پی ایچ ڈی کا طالب علم ہے اور بیتھ اسرائیل ہاسپٹل میں تحقیق کا کام کر رہا تھا۔ اس نے وہیں سے یہ بائیولوجیکل نمونے چوری کیے اور انہیں سمگل کرکے اپنے ساتھ چین لیجا رہا تھا۔ ژینگ نے دوران تفتیش بتایا کہ اسے یہ شیشیاں اس کے ایک دوست ژینگ تاﺅ نے دی تھیں اوراس نے سمجھا کہ شاید انہیں اپنے ساتھ لیجانا غیرقانونی نہیں تھا۔ تاہم امریکی حکام کا کہنا ہے کہ پی ایچ ڈی کے طالب علم اور بیتھ اسرائیل ہاسپٹل میں تحقیق کا کام کرنے والے شخص کے متعلق یہ ماننا مشکل ہے کہ اسے ان بائیولوجیکل نمونوں کی اہمیت کا اندازہ نہ ہو۔بعد ازاں جب اسے انٹرویو روم لیجایا گیا وہاں اس نے اعتراف کر لیا کہ اس نے یہ نمونے بیتھ اسرائیل ہاسپٹل کی ریسرچ لیب سے چوری کیے تھے۔

مزید : بین الاقوامی


loading...