تجزیہ کارارشادبھٹی نے بھارتی مسلمانوں پرمظالم کیخلاف او آئی سی کے ردعمل کو ہیو میو پیتھک قراردیدیا

تجزیہ کارارشادبھٹی نے بھارتی مسلمانوں پرمظالم کیخلاف او آئی سی کے ردعمل کو ...
تجزیہ کارارشادبھٹی نے بھارتی مسلمانوں پرمظالم کیخلاف او آئی سی کے ردعمل کو ہیو میو پیتھک قراردیدیا

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)تجزیہ کار ارشادبھٹی نے کہاہے کہ بھارت میں مسلمانوں پر مظالم پر اوآئی سی کا ہومیو پیتھک بیان آنا بڑی بات ہے ،اسی او آئی سی نے اعلان مکہ سے کشمیر نکا ل دیا تھا اور یہ جو تشویش کااظہار ہوا ہے اس کی وجہ یہ ہے کہ کوالالمپور سمٹ میں بیس سے زائد اسلامی ملکوں نے شرکت کی ہے ۔

جیونیوز کے پروگرام ”رپورٹ کارڈ“میں گفتگوکرتے ہوئے ارشاد بھٹی نے کہا کہ بلاول کو نیب نے بلایا ہے توان کی جانب سے کہا گیاہے کہ نیب حراساں کررہا ہے ، اس وقت سب اپوزیشن رہنماءضمانتوں پر ہیں، دوچار رہ گئے ہیں ، ان کی ضمانتیں بھی ہوجائیں گی ۔ انہوں نے کہا کہ ن لیگ احسن اقبال کی گرفتاری پر جووجہ پیش کررہی ہے ، وہ درست نہیں ہے ۔

ارشادبھٹی کاکہناتھاکہ بھارت میں مسلمانوں پر مظالم پر اوآئی سی کا ہومیو پیتھک بیان آنا بڑی بات ہے ،اسی او آئی سی نے اعلان مکہ سے کشمیر

نکا ل دیا تھا اور یہ جو تشویش کااظہار ہوا ہے اس کی وجہ یہ ہے کہ کوالالمپور سمٹ میں بیس سے زائد اسلامی ملکوں نے شرکت کی ہے ، اس لئے بھارت میں مسلمانوں کی حالت پرتشویش کا اظہار کیا گیاہے ۔انہوں نے کہا کہ بھارت میں مسلمانوں پر ہونیوالے ظلم پر او آئی سی کے بیان کی اتنی زیادہ اہمیت نہیں ہے ۔

مزید : علاقائی /اسلام آباد


loading...